ایل او سی پربھارتی فائرنگ،حکومت کا ردعمل بھی آگیا

ایل او سی پربھارتی فائرنگ،حکومت کا ردعمل بھی آگیا
ایل او سی پربھارتی فائرنگ،حکومت کا ردعمل بھی آگیا

  



اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)وزیر اعظم کی معاون خصوصی فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ لائن آف کنٹرول پر معصوم شہریوں کو نشانہ بنانا بھارتی فوج کی بے حسی اور سفاکی کو ظاہر کرتا ہے۔

ایل او سی پربھارتی جارحیت پرردعمل دیتے ہوئے معاون خصوصی نے کہا لائن آف کنٹرول پر معصوم شہریوں کو نشانہ بنانا بھارتی فوج کی بے حسی اور سفاکی کو ظاہر کرتاہے۔متاثرہ افرادکے زخموں پر مرہم رکھنا وزیراعظم عمران خان کے پرخلوص احساس کا مظاہرہ ہے۔

معاون خصوصی نے کہا لائن آف کنٹرول پر بسنے والے بہادر عوام کو خراج تحسین پیش کرتے ہیں جو دفاع وطن کیلئے اپنی مسلح افواج کے ساتھ شانہ بشانہ سینہ سپرہیں۔ان کی قربانیوں کو سلام پیش کرتے ہیں۔

معاون خصوصی فردوس عاشق اعوان نے کہا  احساس پروگرام کے تحت راشن اسکیم کے ذریعے معاونت کے علاوہ 33498 خاندانوں کی ہر شادی شدہ خاتون کو ہرسہ ماہی میں پانچ ہزار روپے دیے جائیں گے۔اس رقم کی ادائیگی 4سہ ماہیوں تک جاری رہے گی۔

فردوس نے کہاکابینہ کا لائن آف کنٹرول پر رہنے والے افراد کیلئے خصوصی پیکیج ان خاندانوں کی فلاح و بہبود میں ممدو معاون ثابت ہو گا۔

واضح رہے کہ ڈی جی آئی ایس پی آر کے ٹویٹ کے مطابق بھارتی فورسز کی جانب سے گزشتہ چھتیس گھنٹوں سے لائن آف کنٹرول پر بھارتی فوج کی سیز فائر کی خلاف ورزیاں جاری ہیں۔ ڈی جی آئی ایس پی آر کے مطابق پاک فوج نے بھارتی فوج کی اشتعال انگیزیوں کا بھرپور جواب دیااورحاجی پیر سیکٹر میں بھارتی فوج کی چوکی تباہ کردی،جس سے ایک صوبیدار سمیت تین بھارتی فوجی ہلاک اور کچھ زخمی ہوگئے جبکہ دیواسیکٹرمیں بھارتی فوج کی فائرنگ سے پاک فوج کے 2 جوانوں نے جام شہادت نوش کیا۔

ڈی جی آئی ایس پی آر کے مطابق دیوا سیکٹر میں شہید ہوانے والوں میں نائب صوبیدار کانڈیرو اور سپاہی احسان شامل ہیں۔

مزید : اہم خبریں /قومی