کیمرون میں بدعنوانی کے الزام میں 17 سال قید کی سزا پانے والا فرانسیسی شہری4 سال بعد رہا

کیمرون میں بدعنوانی کے الزام میں 17 سال قید کی سزا پانے والا فرانسیسی شہری4 ...

یوانڈے (اے پی پی) کیمرون میں بدعنوانی کے الزام میں 17 سال قید کی سزا پانے والے کیمرون نژاد فرانسیسی شہری کو 4 سال بعد رہا کردیا گیا ۔ برطانوی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق 49 سالہ مائیکل ایٹانانا اور کیمرون کے سابق وزیر صحت ٹائٹس ایڈوزا کو 23 لاکھ ڈالر فراڈ کے الزام میں مجموعی طور پر 20 سال قید کی سزا سنائی گئی تھی تاہم فرانس اور اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کی کونسل نے ان کے خلاف مقدمہ کی سماعت کو غیر شفاف قرار دیتے ہوئے ان کی سزا پر شدید احتجاج کیا تھا۔

مائیکل ایٹانانا کی رہائی کےلئے فرانس کے صدر اور وزیراعظم کی طرف سے اپیل بھی کی گئی جس کے جواب میں کمیرون کے حکام کی طرف سے ان کی رہائی سے انکار کے بعد دونوں ممالک کے درمیان تعلقات کشیدگی کا شکار ہوگئے۔ فرانس کے صدر فرانسو اولاند نے گزشتہ سال کیمرون کی حکومت کو لکھے گئے ایک خط میں کہا تھا کہ ان کا ملک اس بات کو یقینی بنانے کی ہرممکن کوشش کرے گا کہ مائیکل ایٹانانا کے خلاف الزام کی تحقیقات شفاف ہوں ۔ مائیکل ایٹا نانا کی رہائی کیمرون کے صدر کی طرف سے ملک کے اتحاد کی 50 ویں سالگرہ کے موقع پر قیدیوں کی سزاﺅں میں معافی کے اعلان کے نتیجہ میں عمل میں آئی۔ مائیکل ایٹانانا کے وکیل کے مطابق وہ اس وقت رہائی کے بعد یوانڈے میں فرانسیسی سفارتخانے میں پہنچ گئے ہیں۔

مزید : عالمی منظر