بھارتی سیاستدان بھی رحمن ملک کے نقش قدم پر، مسافر انتظار کرتے رہ گئے اور۔۔۔

بھارتی سیاستدان بھی رحمن ملک کے نقش قدم پر، مسافر انتظار کرتے رہ گئے اور۔۔۔
بھارتی سیاستدان بھی رحمن ملک کے نقش قدم پر، مسافر انتظار کرتے رہ گئے اور۔۔۔

  

نئی دلی (نیوز ڈیسک) بھارت میں عام آدمی پارٹی کو جزی کامیابی ضرور ملی ہے لیکن صدیوں سے جاری وی آئی پی کلچر ابھی بھی راج کررہا ہے۔ بھارت کی قومی ایئرلائن کی ایک پرواز بھی اسی وی آئی پی کلچر کا نشانہ بن گئی۔ ایئرانڈیا کی یہ پرواز دارالحکومت سے حیدر آباد جارہی تھی اور س میں ایک یونین وزیر اور سپریم کورٹ کے جج کے علاوہ سینکڑوں مسافر بھی سوار تھے مگر کانگرس پارٹی ایک خاتون کی شاپنگ کی وجہ سے یہ 45منٹ رن وے پر رکی رہی۔

عمران خان کا اپنی اہلیہ کے ہمراہ ’وی آئی پی ‘ سفر

تلنگانہ صوبے سے تعلق رکھنے والی لیڈر رینکا چودھری کے بارے میں معلوم ہوا ہے کہ وہ ایئرپورٹ کے شاپنگ ایریا میں موجود تھیں اور اس دوران جہاز کی روانگی کیلئے مسلسل اعلانات کئے جارہے تھے۔ مسلسل انتظار کے باعث کنٹرول ٹاور کی طرف سے پائلٹ کو ٹیک آف کیلئے دیا گیا وقت گزرگیا اور اسے پھر سے نئی قطار میں لگنا پڑا۔

بالآخر پونے گھنٹے کی تاخیر کے بعد کانگرس رہنما نمودار ہوئیں اور اگرچہ مسافر غیر معمولی تاخیر کی وجہ سے شدید پریشان اور مشتعل تھے مگر خاتون رہنما نے تاخیر کی ذمہ داری قبول کرنے سے صاف انکار کردیا۔ ان کا کہنا تھا کہ پہلے یہ ثابت کیا جائے کہ وہ شاپنگ کررہی تھیں اور پھر ان پر الزام لگایا جائے۔ ان کا کہنا تھا کہ ان کے خلاف بکواس کی جارہی ہے۔

مزید : بین الاقوامی