ڈنمارک کی حکومت نے جانوروں کو ذبح کرنے پر پابندی لگادی

ڈنمارک کی حکومت نے جانوروں کو ذبح کرنے پر پابندی لگادی
ڈنمارک کی حکومت نے جانوروں کو ذبح کرنے پر پابندی لگادی

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

کوپن ہیگن (ویب ڈیسک) ڈنمارک کی حکومت نے جانوروں کو یہودی اور مسلم مذاہب کی تعلیمات کے مطابق ذبح کرکے حلال اور کوشرگوشت حاصل کرنے کے طریقہ پر پابندی لگادی ہے۔ ڈینش حکومت نے جانوروں کو ذبح کرنے پر پابندی کا قانون منظور کرکے اسے فوری طور پر نافذ کردیا ہے۔ اس بارے میں ڈنمارک کے وزیر زراعت و کوراک ڈین جورگینسن نے مضحکہ خیز دعویٰ کیا ہے کہ جانورون کے حقوق کی اہمیت مذہب سے زیادہ ہے۔ دوری جانب اس قانون کی مخالفت کرنے والوں کا موقف ہے کہ ڈنمارک کے قانون کے مابق اس ملک کے ہر شہری کو اپنی مذہبی تعلیمات پر عمل کرنے کا حق حاصل ہے لیکن جانوروں کے ذبح کرنے پر پابندی ان کی مذہبی آزادی میں مداخلت اور آئین کے خلاف ہے۔

مدارس کا نصاب تبدیل نہیں کر رہے بلکہ ایسے مضامین شامل کر رہے ہیں جس سے برداشت کو فروغ دے سکیں : شہباز شریف

مزید : ڈیلی بائیٹس