مقبوضہ کشمیر کے جنوبی ضلع شوپیان میں بھارتی فوج کیساتھ جھڑپ، ایک مجاہد شہید

مقبوضہ کشمیر کے جنوبی ضلع شوپیان میں بھارتی فوج کیساتھ جھڑپ، ایک مجاہد شہید

 شوپیان(کے پی آئی)مقبوضہ کشمیر کے جنوبی ضلع شوپیان کے مضافات میں ہف شیرمال زینہ پورہ گاں میں مجاہدین اور فورسز کے درمیان معرکہ جھڑپ ہوئی ، جس میں ایک مجاہد زخمی ہواجو بعد میں شہید ہوگیا۔ پولیس کا کہنا ہے ایک مجاہد محصور ہے، اور آپریشن تک ملتوی کردیا گیا ہے۔پولیس نے بتایا کہ انہیں اس بات کی مصدقہ طور پراطلاع ملی تھی کہ ہف شرمال گاؤں میں دو مجاہد چھپے بیٹھے ہیں جس کے بعد54آر آر ، ایس ا جی شوپیان اور سی آر پی ایف نے قریب تین بجے گاؤں کا محاصرہ کیا اور اس گھر کے ارد گرد گھیرا تنگ کیا جس میں مجاہد موجود تھے۔جونہی آپریشن شروع کیا گیا تو مجاہدین نے فورسز پر اندھا دھند فائرنگ کی جس کے بعد فائرنگ کا تبادلہ شروع ہوا جو تقریبا بیس منٹ تک جاری رہا۔پولیس نے بتایا چونکہ موسم خراب تھا اوربارش بھی ہورہی تھی لہذا آپریشن عارضی طورپر ملتوی کیا گیا۔پولیس کا مزید کہنا ہے کہ گاؤں میں ممکنہ طور پر دومجاہد محصور ہیں جن کا تعلق لشکر طیبہ سے بتایا جاتا ہے۔اورفائرنگ کے تبادلے میں ان میں سے ایک مجاہد زخمی بھی ہوا، جو شام دیر گئے چل بسا۔ پولیس اور فورسز نے محاصرہ تنگ کر دیا ہے اور وہاں جنریٹروں کے ذریعے روشنی کا انتظام کرلیا گیا ہے تاکہ مجاہد محاصرہ توڑ کر فرار نہ ہوسکے۔مقامی لوگوں کے حوالے سے پولیس ذرائع نے کہا کہ دونوں مجاہد مقامی ہیں۔ مقامی آبادی سے کہا گیا ہے کہ وہ اپنے گھروں میں محصور رہیں تاکہ جانی نقصان کااندیشہ نہ رہے۔پولیس اور فورسز کے اعلی افسران وہاں پہنچ گئے ہیں اور فورسز کی مزید کمک وہاں پہنچائی گئی ہے۔

مزید : عالمی منظر