رکشہ ڈرائیور کی 19 سالہ لڑکی سے زیادتی، متاثرہ نے موٹرسائیکل سواروں سے مدد مانگی تو انہوں نے بھی ریپ کردیا، شرمناک تفصیلات

رکشہ ڈرائیور کی 19 سالہ لڑکی سے زیادتی، متاثرہ نے موٹرسائیکل سواروں سے مدد ...
رکشہ ڈرائیور کی 19 سالہ لڑکی سے زیادتی، متاثرہ نے موٹرسائیکل سواروں سے مدد مانگی تو انہوں نے بھی ریپ کردیا، شرمناک تفصیلات

  



ممبئی (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارتی ریاست مہاراشٹر کے شہر نوی ممبئی میں ایک 19 سالہ لڑکی کو 2 گھنٹوں کے دوران 2 مختلف واقعات میں تین افراد نے زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا، پولیس نے تینوں ملزمان کو گرفتار کرلیا جن میں ایک رکشہ ڈرائیور بھی شامل ہے۔

پولیس کے مطابق متاثرہ لڑکی 18 فروری کو اپنے رشتہ داروں کے ساتھ گھاٹ کوپر ریلوے سٹیشن پر موجود تھی لیکن ٹرین میں سوار نہیں ہوپائی، اس کے بعد وہ ضلع تھانے میں ممبرا ریلوے سٹیشن پہنچی اور وہیں سوگئی۔ 19 فروری کو اس نے ایک اور ٹرین پکڑی اور ڈیوا سٹیشن پہنچی جہاں اس نے ایک بھکاری خاتون سے درخواست کی کہ وہ اس کی نوز رنگ بیچنے میں مدد کرے، شام تک اسے کوکا بیچنے میں کامیابی حاصل نہیں ہوئی اور وہ سٹیشن کا راستہ بھول گئی۔

رات کو ساڑھے 8 بجے وہ ایک ہوٹل پہنچی اور اس نے ایک رکشہ ڈرائیور سے کہا کہ اسے قریبی ریلوے سٹیشن چھوڑ دے۔ رکشتہ ڈرائیور لڑکی کو سٹیشن لے جانے کی بجائے نوی ممبئی میں ایک ویران بلڈنگ میں لے گیا اور اسے زیادتی کا نشانہ بناڈالا، بعد ازاں ملزم رکشہ ڈرائیور لڑکی کو قریبی مندر کے پاس چھوڑ گیا۔

رات کو 10 بجے لڑکی نے 2 لوگوں سے مدد مانگی اور کہا کہ اسے ریلوے سٹیشن چھوڑ دیں، دونوں ملزمان لڑکی کو موٹرسائیکل پر بٹھا کر گھنوسلی کے علاقے میں لے گئے اور اس کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔

19 فروری کو پیش آنے والے واقعے کا 23 فروری کو مقدمہ درج کرکے ملزمان کو 26 فروری کو گرفتار کیا گیا ہے، تینوں ملزمان کو تین روزہ جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا گیا ہے۔

مزید : جرم و انصاف