پی ایس ایل بخار اور قلندرز کا دھمال

 پی ایس ایل بخار اور قلندرز کا دھمال
 پی ایس ایل بخار اور قلندرز کا دھمال

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

پاکستان سپر لیگ کا آغاز پاکستان کے سب سے بڑے شہر کراچی میں ہو چکاہے جس میں ابھی تک چھ میچز کھیلے جا چکے ہیں۔گزشتہ روز لیگ  میں آرام ہونے کے باعث آج سے پھر لیگ کے دوسرے سپیل کا آغاز ہو جائے گا۔لیگ میں دنیا بھر کے مایہ ناز کرکٹر کی شمولیت نے اس  کو پاکستان کا برانڈ بنا دیا ہے جس سے یہ بات واضح ہو گئی ہے کہ پاکستان کھیلوں کے حوالے سے پُر امن ملک ہے۔اس بات کا عملی ثبوت یہ ہے کہ کرس گیل،ایلیکس ہلز،والٹن،براتھویٹ،راشد خان،محمد نبی،بین ڈنک، وائسے،ریلیروسو،ونس،منرو،انگرام،ایڈم لیئتھ،عمران طاہر،کرس لین،بین کٹنگ،بینٹن،ڈیل سٹین،لیوس گریگری،سالٹ،جورڈن اور ایسے ہی بہت سے نام ہیں جو پاکستان کے پُر امن ہونے کی گواہی دینے کے لئے یہاں موجود ہیں۔

پی ایس ایل کا بخار ان دنوں پورے پاکستان کے ساتھ کرکٹ لورز  پر چڑھا ہوا ہے کیونکہ اس کی مقبولیت شروع دن سے ہی بلندیوں کو چھو رہی تھی جس میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے۔پاکستان میں کرکٹ کی واپسی میں جہاں پاکستان کرکٹ بورڈ نے کئی احسن اقدامات اٹھائے وہیں پاک فوج نے بھی اپنی ذمہ داریوں کو بخوبی نبھایا،جس کے لئے ان دو اداروں کو سلام پیش کرتا ہوں۔دوسری جانب پی ایس ایل 6 میں تمام ٹیموں کے مابین کھیلے گئے پہلے سیشن کے چھ میچز کے بعد لاہور قلندر پہلے اور اسلام آباد یونائٹڈ دوسرے نمبر پر براجمان ہو چکی ہیں۔جبکہ کراچی اور پشاور ایک ایک میچز جیت کر تیسرے اور چوتھے نمبر پر موجود ہیں۔اس سیشن کی خاص بات لاہور قلندر کی حیران کن اور شاندار پرفارمنس ہے۔شائقین کرکٹ کے ساتھ ماہرین کرکٹ بھی لاہور قلندر کی حیرت انگیز پرفارمنس پر ششدر ہیں۔

کیونکہ پہلے پانچ ایونٹ میں لاہور قلندر نے وہ کمال نہیں دکھایا جو اس ایونٹ کے آغاز میں ہی دکھا دیا ہے اور اپنے خطرناک عزائم سے باقی ٹیموں کو پیغام دے دیا ہے۔لاہور قلندر کی اس شاندار کارگردگی کے پیچھے لاہور قلندر کے اونر فواد رانا، عاطف رانا اور ڈائریکٹر عاقب جاوید کی پانچ سالوں کی کڑی محنت شامل ہے انہوں نے ان سالوں میں ایسی ٹیم کی بنیاد رکھی ہے جو اس ایونٹ میں سب سے مختلف نظر آرہی ہے۔پہلے دو میچوں میں ان کی کار کردگی کا گراف اگر دوسری ٹیموں کے مقابلے میں دیکھا جائے تو بہت بلند نظر آ رہا ہے،اس کے ساتھ ساتھ ان کی باڈی لینگوئج بھی بہت کمال کی دکھائی دیتی ہے،کھلاڑیوں میں جیت کا جذبہ بھی انتہائی شاندار ہے۔پہلے دو مقابلوں میں انہوں نے یہ بتایا ہے کہ وہ یہ ٹورنامنٹ جیتنے کے لئے آئے ہیں۔

اگر ان کی یہی پرفارمنس رہی تو قلندروں کو دھمال ڈالنے سے کوئی نہیں روک سکتا۔اس لئے میرا اندازہ بھی یہی ہے کہ اس مرتبہ پی ایس ایل کے ٹائٹل کے لئے  لاہور قلندر فیورٹ ہے۔ ملتان سلطان اس مرتبہ اپنے دونوں ابتدائی میچ ہار چکی ہے لیکن اس کا مطلب یہ نہیں کہ آگے ایونٹ میں وہ آؤٹ آف فارم ہوں گے ٹورنامنٹ ابھی اوپن ہے اور نتائج ابھی آنے ہیں اس کے لئے ملتان سلطان کو اپنے ٹیم کمبینیشن کو بہترین بنانے اور اسے جیتنے کے لئے استعمال کرنا ہو گا  محمد رضوان کا ستارہ ان دنوں اپنے عروج پر ہے ان کی اپنی ذاتی پرفارمنس کی   بات کی جائے تو اس کی سب سے اہم وجہ یہ ہے کہ وہ بلاخوف و خطر اپنے سٹائل میں کھیلنے کے عادی ہیں۔یہی وجہ ہے کہ وہ کسی دباؤمیں آئے بغیر کھیل رہے ہیں اور بغیر کسی پریشر کے اپنی پرفارمنس سے اپنی ٹیم اور پاکستان کے کام آرہے ہیں۔

مزید :

رائے -کالم -