فردوس عاشق اعوان اور علی اسجد ملہی وزیراعظم کے پاس پہنچ گئے ،  بیرسٹر علی ظفرکی عمران خان کو  این اے 75 میں دوبارہ انتخاب سے متعلق  بریفنگ 

فردوس عاشق اعوان اور علی اسجد ملہی وزیراعظم کے پاس پہنچ گئے ،  بیرسٹر علی ...
فردوس عاشق اعوان اور علی اسجد ملہی وزیراعظم کے پاس پہنچ گئے ،  بیرسٹر علی ظفرکی عمران خان کو  این اے 75 میں دوبارہ انتخاب سے متعلق  بریفنگ 

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن) وزیر اعظم عمران خان کو این اے 75 ڈسکہ میں دوبارہ انتخاب سے متعلق الیکشن کمیشن کے فیصلے پر بیرسٹر علی ظفر نے قانونی نکات پر بریفنگ دی جس کے بعد فیصلے کو عدالت میں چیلنج کرنے کی حکمت عملی ترتیب دے دی گئی۔

نجی ٹی وی کے مطابق وزیر اعظم عمران خان سے معاون خصوصی پنجاب ڈاکٹر فردوس عاشق، علی ظفر ایڈووکیٹ اور این اے 75سے امیدوار علی اسجد ملہی نے ملاقات کی۔ذرائع کا کہنا ہے کہ بیرسٹر علی ظفر نے وزیر اعظم کو اس حوالے سے قانونی مشاورت دی،نو منتخب سینیٹر  بیرسٹرعلی ظفر کی رائے کی روشنی میں الیکشن کمیشن کے فیصلے کو عدالت میں دو پٹیشنز کے ذریعے چیلنج کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔ملاقات میں ڈسکہ کے ضمنی انتخاب سے متعلق وزیر اعظم عمران خان کوبریف کیا گیا جس کے بعد انہوں نے نے قانونی لائحہ عمل کی منظوری دی گئی، تحریک انصاف عدالت میں 2 پٹیشنز دائر کرے گی، ایک پٹیشن میں الیکشن کمیشن کے دوبارہ انتخاب کو چیلنج کیا جائے گا، دوسری پٹیشن میں افسران کے خلاف کارروائی کے فیصلے کو بھی چیلنج کیا جائے گا۔

ملاقات کے بعد علی اسجد ملہی نے میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ وزیر اعظم عمران خان کے سامنے ساری صورت حال رکھ دی ہے، وزیر اعظم نے فیصلے کو عدالت میں چیلنج کرنے کی منظوری دیدی، پیر کے روز الیکشن کمیشن کے فیصلے کے خلاف اپیل دائر کی جائے گی۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -