بلال یاسین حملہ‘ حسیب وکی کے والد اور بھائی کی عبوری ضمانتوں میں توسیع 

 بلال یاسین حملہ‘ حسیب وکی کے والد اور بھائی کی عبوری ضمانتوں میں توسیع 

  

لاہور(نامہ نگار)انسداددہشت گردی کی عدالت کے جج اعجازاحمد بٹر نے پاکستان مسلم لیگ (ن) کے راہنما بلال یاسین پرقاتلانہ حملہ کے مقدمہ میں شریک  مبینہ ماسٹر مائنڈ حسیب وکی کے والد اور بھائی کی عبوری ضمانتوں میں 28 فروری تک توسیع کر دی عدالت نے آئندہ سماعت پر بلال یاسین کے وکیل سے مزید دلائل طلب کر لئے   میاں حسیب وکی کے والد میاں حامد محمود اور بھائی اسد حامد عدالت میں پیش ہوئے،تفتیشی افسر کی جانب سے عدالت میں ملزمان سے متعلق رپورٹ پیش کی گئی ملزمان کی جانب سے میاں علی اشفاق ایڈووکیٹ نے موقف اختیارکیا کہ بلال یاسین کے بہنوئی خواجہ ہارون کے ضمنی بیان پر ملزمان کو حملہ کا ماسٹر مائنڈ بتایا گیا جبکہ گواہ خواجہ ہارون سے حسین وکی کی پرانی مقدمہ بازی چل رہی ہے ملزمان کو واقع کے بارہ دن بعد تاخیر سے بد نیتی پر مقدمے میں ملوث کیا گیاعدالت سے استدعا ہے کہ ملزمان کی عبوری ضمانت کنفرم کرنے کا حکم دیا جائے۔

مزید :

علاقائی -