حکومت سماجی، معاشی ترقی کیلئے ”مرکز“ قائم کرنے کی منصوبہ بندی کررہی ہے: وفاقی وزراء 

حکومت سماجی، معاشی ترقی کیلئے ”مرکز“ قائم کرنے کی منصوبہ بندی کررہی ہے: ...

  

اسلام آباد (این این آئی)حکومت ملک میں سماجی و معاشی ترقی و خوشحالی کیلئے تمام کارپوریٹ اداروں کو مل کر کام کرنے کیلئے ایک وفاقی مرکز قائم کرنے کی منصوبہ بندی کر رہی ہے جس کے تحت تمام نجی ادارے مل کر خدمات انجام دیں گے۔ان خیالات کا اظہار وفاقی وزراء نے نیشنل فورم فار انوائرنمنٹ اینڈ ہیلتھ کے تحت منعقدہ 14ویں عالمی سی ایس آر کانفرنس اور ایوارڈ 2022کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔اس موقع پر وفاقی وزیر برائے غذائی پیداوار سید فخر امام، وفاقی وزیر برائے ریلوے اعظم سواتی اور وزیر مملکت برائے اطلاعات فرخ حبیب نے خصوصی شرکت کی جبکہ دیگر مقررین میں چیئرمین نیپرا توصیف فاروقی، نیشنل فورم کے صدر محمد نعیم قریشی، سیکریڑی جنرل رقیہ نعیم، نائب صدر محمد نعیم قریشی، کروٹ پاور سے این اے زبیری، اخوت فاؤنڈیشن کے بانی ڈاکٹر امجد ثاقب، پنک ربن فاؤنڈیشن کے عمر آفتاب، ملین اسماعیلز کے ذیشان افضال، فجر رابعہ پاشا، سی ایس آر کلب کے صد ر انیس یونس، مصدق عزیز، یوگی وجاحت، منیب احمد، فارم ایو کے ڈیپٹی سی ای او جمشید عمر، اوجی ڈی سی ایل کے جی ایم سی ایس آر سلیم باز خان، تابندہ عثمان، علی اشعر و دیگر نے بھی خطاب کیا۔اس موقع پر وفاقی وزیر اطلاعات نے کہاکہ این ایف ای ایچ کے تحت تمام اداروں کو ایک پلیٹ فارم پر جمع کرنا ایک بہت بڑی کامیابی ہے اور اگر تمام نجی اور سرکاری ادارے مل کر کام کریں تو ملک میں سماجی ترقی کیلئے بھر پور کام کیا جا سکتا ہے اور اس سے ملک میں مہنگائی میں بھی کمی لائی جا سکتی ہے۔انہوں نے کہاکہ موجودہ حکومت احساس پروگرام کے تحت ملک کا سب سے بڑا فلاحی منصوبہ چلا رہی ہے اور اس کیلئے 260بلین کا بجٹ رکھا گیا ہے جو 34مختلف منصوبوں پر خرچ کیا جا رہا ہے۔اس کے علاوہ 92000طلباء کو اعلی تعلیم حاصل کرنے کیلئے سکالرشپ بھی دی جا رہی ہیں۔اس موقع پر وفاق وزیر برائے غذائی پیداوار سید فخر امام نے کہاکہ موجودہ حکومت زراعت کے شعبے کی ترقی کیلئے انقلابی اقدامات کر رہی ہے۔ وزیر ریلوے اعظم سواتی نے کہاکہ کارپوریٹ سیکڑ اتنے بڑے پیمانے پر سماجی خدمات کیلئے کام کررہی ہے اس پر انکو جتنی داد دی جائے وہ کم ہے۔

وفاقی وزراء 

مزید :

صفحہ آخر -