ملتان بھر میں وارداتیں،پولیس لاپتہ، شہری بھی خوفزدہ

ملتان بھر میں وارداتیں،پولیس لاپتہ، شہری بھی خوفزدہ

  

 ملتان (  خصو صی   رپورٹر  ) ملتان بھر میں چوری و ڈکیتی کی بڑھتی ہو ئی وارداتیں معمول بن چکی ہیں لیکن پولیس انتظامیہ خاموش تماشائی کا کردار ادا کر رہی ہے جس کی وجہ سے مکین اور تاجر برادری میں عدم تحفظ کی فضا پائی جاتی ہے آئے روز چوری و ڈکیتی کی بڑھتی ہو ئی وارداتوں اور تاجروں کے قتل کی پرزورمذمت کرتے ہیں،گذشتہ دنوں نے اندرون شہر جوڑی سہرائے بازار،لیاقت آباد اور دولت گیٹ اور کئی وارداتوں میں تاجر شہید ہوچکے ہیں لیکن پولیس سے کوئی ملزم گرفتار نہیں ہورہے جس کی جتنی مذمت کی جائے کم ہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے مرکزی انجمن (بقیہ نمبر54صفحہ6پر)

تاجران گلگشت میں احتجاجی مظاہرہ کے دوران تاجروں سے خطاب کرتے ہوئے کیا،اس موقع پر محمد اسلم،خرم،امتیاز،شہزاد،نعیم،نعمان،خالد خان ودیگر تاجر رہنما شریک تھے،مظاہرین نے روڈ بلاک کر کے پولیس مخالف نعرے بازی کی،عارف فصیح اللہ نے مزید کہا کہ ایس پی سٹی احمد نواز کی تعیناتی کے بعد وارداتوں کا ایک نیا سلسلہ شروع ہوگیا ہے،ہم وزیر اعلی پنجاب،آئی پنجاب سے مطالبہ کرتے ہیں کہ ایس پی سٹی ملتان کو معطل کر کے ایماندار پولیس آفیسر لگایا جائے اور تاجروں کے جان ومال کا تحفظ یقینی بنایا جائے اور تاجروں کے ساتھ ہونے والی وارداتوں کے ملزمان کو گرفتار کر کے ان کا مال برآمد کرایا جائے نہیں تو تاجر برادری احتجاجی تحریک چلانے پر مجبور ہوگی۔

لاپتہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -