سکھر میں گٹگا پان پراگ و مضر صحت اشیا کی کھلے عام فروخت جاری

سکھر میں گٹگا پان پراگ و مضر صحت اشیا کی کھلے عام فروخت جاری

  

سکھر (ڈسٹرکٹ رپورٹر)سکھر میں گٹگا پان پراگ و مضر صحت اشیاسمیت منشیات کی کھلے عام فروخت کا سلسلہ جاری، شہری و سماجی حلقوں میں تشویش کی لہر، انتظامیہ نوجوان نسل کو سماجی برائیوں سے بچاکر ملوث افراد کو گرفتارکریں،حاجی شریف بندھانی و دیگر سماجی رہنماں کا مطالبہ۔ تفصیلات کے مطابق سکھر اور اسکے گردانوح کے مختلف شہروں میں عدالتی احکامات کے باوجود پولیس سمیت متعلقہ محکموں کی سرپرستی میں مضر صحت اشیا سمیت منشیات کی کھلے عام فروخت کا سلسلہ جاری ہے شہر میں مضر صحت اشیا کی فروخت پر پابندی کے باوجود انسانی جانوں سے کھیلنے والے ملوث افراد پولیس کی سرپرستی میں دوگنے داموں اپنا گھنانا کاروبار جاری رکھے ہوئے ہیں اور شہر کے مختلف علاقوں بلخصوص نیو گوٹھ میں نوجوان نسل کی تباہی کی ذمہ دار پان پراگ،گٹگا،رجنی،ون ٹو ون،مین پوری و منشیات دیگرمضر صحت اشیاکھلے عام فروخت کی جارہی ہے،گھنانے کاروبار میں ملوث افراد نوجوان نسل سے دوگنے دام وصول کرکے انہیں ذہر فروخت کررہے ہیں لیکن سکھر پولیس اور انتظامیہ رشوت کے عیوض خاموش تماشائی کا کردار ادا کررہی ہے جو ملک کے مستقبل نوجوان نسل کیلئے تباہی بن سکتا ہے دوسری جانب راجپوت بندھانی ویلفئیر ایسوسی ایشن کے صدر و چیف سردار حاجی محمد شریف بندھانی، شہریوں سمیت سماجی حلقوں نے گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے سکھر انتظامیہ کو سخت تنقید کانشانہ بنایا۔

مزید :

کراچی صفحہ آخر -