پاکستانی ہاکی کھلاڑی دوسرے ملکوں کی شہریت کیلئے کوشاں ہوگئے

پاکستانی ہاکی کھلاڑی دوسرے ملکوں کی شہریت کیلئے کوشاں ہوگئے

لاہور(آئی این پی) پاکستان ہاکی ٹیم کے بعض کھلاڑیوں نے مالی حالات سے دل بر داشتہ ہوکر غیر ملکی ہاکی لیگ اور دوسرے ملکوں کی شہریت کے حصول کے لئے بھاگ دوڑ شروع کردی ۔ ذرائع کے مطابق چند کھلاڑیوں نے پی ایچ ایف کے نام اپنے خط میں لکھا ہے کہ ان کو پچھلے ڈیڑھ سال سے سالانہ معاہدے کی رقم بھی نہیں دی گئی ہے جبکہ جن اداروں سے وہ منسلک ہیں وہاں سے ملنے والی تنخواہ میں ان کے لئے اپنی فیملی کو بہتر انداز میں رکھنا ناممکن ہے اس لئے ان کے پاس اس کے علاوہ کوئی چارہ نہیں ہے کہ وہ قومی ہاکی ٹیم سے خود کو علیحدہ کر کے نئے کھلاڑیوں کے لئے راستہ چھوڑ دیں، کھلاڑیوں نے اپنے خط میں یہ بھی تحریر کیا ہے کہ ایشین گیمز اور چیمپئنز ٹرافی میں سلور میڈلز کے بعد نہ تو قومی اسپورٹس پالیسی کے تحت انہیں انعامی رقم دی گئی نہ ہی وزیر اعظم سے ملاقات ہوسکی،اس لئے پی ایچ ایف ہمیں بیرون ملک ہاکی لیگ کھیلنے کے لئے این او سی جاری کرے، کھلاڑیوں کا موقف ہے کہ پی ایچ ایف کے مالی معا ملات میں بظاہر بہتری کے لئے کوئی آثار دکھائی نہیں دے رہے ہیں۔ قومی ٹیم کے دو سینئر کھلاڑیوں نے بیرون ملک کوچنگ کے لئے بھی کوششیں شروع کردی ہے اور وہ ان ملکوں کی شہریت کے حصول کے لئے بھی کوششیں کررہے ہیں۔

مزید : کھیل اور کھلاڑی