یوکرائن کے مشرقی حصے میں باغیوں کے راکٹ حملے‘30ہلاک 80زخمی

یوکرائن کے مشرقی حصے میں باغیوں کے راکٹ حملے‘30ہلاک 80زخمی

کیف (این این آئی)یوکرین کی وزارت داخلہ نے کہاہے کہ ملک کے مشرقی حصے میں ماریوپول نامی شہر پر راکٹ حملوں میں 35افراد ہلاک اور 80 زخمی ہوگئے ٗزخمیوں میں بعض کی حالت نازک ہے جس کے باعث ہلاکتوں میں اضافے کاخدشہ ہے میڈیا رپورٹ کے مطابق یوکرینی حکومت نے حملوں کے لیے روس نواز علیحدگی پسند باغیوں کو ذمہ دار ٹھہرایا ہے ٗباغیوں کا کہنا ہے کہ یہ راکٹ یوکرینی فوج نے داغے تھے۔مشرقی یوکرین میں باغیوں کے مرکزی رہنما نے پہلے تو ماریوپول پر چڑھائی کا اعلان کیا تاہم پھر کہا کہ وہ شہر میں داخل نہیں ہوں گے۔یوکرینی حکام کے مطابق راکٹ حملوں میں روس کے حامی باغیوں نے ایک مارکیٹ اور رہائشی عمارت کو نشانہ بنایا۔یورپ میں تحفظ اور تعاون کی تنظیم او ایس سی ای کا بھی کہنا ہے کہ راکٹ باغیوں کے زیرِ اثر علاقے سے پھینکے گئے تھے۔خودساختہ عوامی جمہوریہ دونیستک کے سربراہ الیگزینڈر ذاخارچینکو نے کہا کہ ان کی افواج نے ماریوپول کے نزدیک کسی عسکری کارروائی میں حصہ نہیں لیا۔ انہوں نے کہا کہ یوکرین کی جانب سے باغیوں پر راکٹ حملوں کا الزام عائد کیے جانے کے بعد انھوں نے اپنے فوجیوں کو شہر کے مشرق میں یوکرینی فوج کی پوزیشنوں پر حملہ کرنے کا حکم دیا ادھر یوکرین اور نیٹو کا کہنا ہے کہ روس ان باغیوں کی حمایت کر رہا ہے جن کے سربراہ الیگزینڈر ذاخارچنکو نے کہا تھا کہ باغی جنگ بندی کے مذاکرات کی مزید کوششیں نہیں کریں گے اور وہ کیئف کے ساتھ جنگ بندی نہیں چاہتے۔

مزید : عالمی منظر