گستاخانہ خاکوں کیخلاف صحافی تنظیموں کا پنجاب اسمبلی کے سامنے احتجاجی کیمپ

گستاخانہ خاکوں کیخلاف صحافی تنظیموں کا پنجاب اسمبلی کے سامنے احتجاجی کیمپ

لاہور(خبر نگار) گستاخانہ خاکوں کے خلاف صحافی تنظیموں کے زیر اہتمام پنجاب اسمبلی کے سامنے احتجاجی کیمپ لگایا گیا جس میں پاکستان ایسوسی ایشن آف فوٹو جرنلسٹ،آل پاکستان سائبر نیوز سوسائٹی و دیگر صحافی تنظیموں کے عہدیداران و اراکین نے بڑی تعداد میں شرکت کی۔اس موقع پر اعلان کیا گیا کہ گستاخانہ خاکوں کی اشاعت کے خلاف 28جنوری کو ملک گیر احتجاج کیا جائے گا لاہور پریس کلب کے سامنے بدھ کو دن تین بجے احتجاجی مظاہرہ کیا جائے گا جبکہ پانچوں صوبوں و آزادکشمیر کے تمام شہروں میں پریس کلب کے سامنے بھی احتجاجی مظاہرے کئے جا ئیں گے۔اس موقع پر شرکاء نے فرانسیسی میگزین چارلی ایبڈو کے خلاف شدید نعرے بازی کی گئی اور گستاخانہ خاکوں کی اشاعت کو آزادی صحافت نہیں بلکہ مجرمانہ فعل قرار دیا پاکستان ایسوسی ایشن آف فوٹو جرنلسٹ کے مرکزی جنرل سیکرٹری محمد رمضان،آل پاکستان سائبر نیوز سوسائٹی کے جنرل سیکرٹری ممتاز حیدر،اپڈیٹس میڈیا گروپ آف پاکستان کے رہنما ؤں محمد شاہد محمود،عاصم علی،پنجاب یونین آف جرنلسٹ کے تاثیر مصطفی،فرزند علی،سید عدنان،ورلڈ کرائم نیوز سوسائٹی کے رہنما احسن چوہدری،فاروق ساجد و دیگر نے کہا ہے کہ حرمت رسولﷺ پر جانیں قربان کرنا ہمارا ایمان ہے۔پاکستان کے صحافی حرمت رسولﷺ کے لئے میدان میں نکل چکے ہیں۔معاشرے کا ہر فرد احتجاج کر رہا ہے۔ہم چارلی ایبڈو کے گستاخانہ خاکوں کی شدید مذمت کرتے ہوئے مطالبہ کرتے ہیں کہ گستاخ میگزین کو بند کروایا جائے۔نبی کریم ﷺ کی گستاخی آزادی اظہار رائے نہیں بلکہ دنیا کی سب سے بڑی دہشت گردی ہے۔ انہوں نے کہا کہ فرانس میں گستاخانہ خاکوں کی اشاعت پر دنیا کے مسلمان سراپا احتجاج ہیں۔اس حوالہ سے مسلم حکمرانوں کو بھی جراتمندانہ مؤقف اختیار کرنا چاہئے۔اسلامی سربراہی کانفرنس بلائی جائے ۔یورپی یونین،اقوام متحدہ اور دیگر عالمی اداروں کی اس حوالہ سے خاموشی افسوسناک ہے۔عالمی سطح پر انبیاء کی گستاخی کا قانون بننا چاہئے۔انہوں نے کہاکہ نام نہاد دہشت گردی کے خلاف جنگ لڑنیو الے مغربی ملکوں کے حکمران شان رسالت ﷺ میں گستاخیاں روکیں۔ عالمی سطح پر تمام انبیاء کی حرمت کے تحفظ کیلئے قانون سازی کی جائے۔ ایسا کرنے سے ہی دنیا میں حقیقی امن قائم ہو سکتا ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...