چوری کے الزام میں گرفتار باپ بیٹوں کا ایک روزہ جسمانی ریمانڈ

چوری کے الزام میں گرفتار باپ بیٹوں کا ایک روزہ جسمانی ریمانڈ

لاہور(خبرنگار) ڈیوٹی جج کینٹ کچہری محمد ذکاء اللہ نے رکشہ سے سلنڈر ، بیٹری اور ٹائر (سٹپنی) چوری کرنے کے الزام میں گرفتار تین ملزمان باپ بیٹوں عثمان وغیرہ کا ایک دن کا جسمانی ریمانڈ دے دیا ہے۔ گرفتار ملزمان عثمان، عمران اور اس کے والد یعقوب کے خلاف تھانہ سول لائن پولیس نے مقدمہ نمبر25/15 درج کر رکھا ہے جس میں ملزمان عثمان، عمران اور ان کے والد محمد یعقوب پر الزام ہے کہ انہوں نے محنت کش محمد رفیق کا رکشہ چلانے کے لئے کرائے پر حاصل کیااور دو ماہ تک رکشہ کا کرایہ نہ دیا۔ اس کے بعد رکشہ سے سلنڈر، بیٹری اور رکشہ کا ٹائر (سٹپنی) غائب کر لی جس پر رکشہ مالک محمد رفیق نے تینوں ملزمان باپ اور بیٹوں کے خلاف چوری کا مقدمہ درج کروا رکھا ہے۔تھانہ سول لائن کے تفتیشی افسر امانت علی نے گرفتار تینوں ملزمان باپ بیٹوں کو چھٹی کے دن گزشتہ روز ڈیوٹی جج کی عدالت میں پیش کیا جس پر ڈیوٹی جج محمد ذکاء اللہ نے گرفتار ملزمان عمران ، عثمان اور ان کے والد محمد یعقوب کو ایک ایک روز کے جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا ہے اور مزید تفتیش اور ریکوری کر کے متعلقہ عدالت میں آج صبح پی ش کرنے کا حکم دیا ہے۔ دوسری جانب مقدمہ مدعی محمد رفیق نے سی سی پی او لاہور کیپٹن محمد امین وینس ، ڈی آئی جی انوسٹی گیشن شہزاد سلطان، ایس ایس پی انوسٹی گیشن رانا ایاز سلیم سے مطالبہ کیا ہے کہ گرفتار ملزمان سے اس کی ریکوری کروا کر اسے انصاف فراہم کیا جائے۔جبکہ اس حوالے سے تفتیشی افسر امانت علی کا کہنا ہے کہ ملزمان کا مزید جسمانی ریمانڈ حاصل کر کے ریکوری کی جائے گی۔

مزید : میٹروپولیٹن 4