سول لائن :ہوٹل مینجرر کے قاتلوں کو پولیس گرفتار نہ کر سکی

سول لائن :ہوٹل مینجرر کے قاتلوں کو پولیس گرفتار نہ کر سکی
 سول لائن :ہوٹل مینجرر کے قاتلوں کو پولیس گرفتار نہ کر سکی

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

 لاہور(کرائم سیل) سول لائن کے علا قہ میں شناختی کارڈ مانگنے پر شراب کے نشے میں دھت افرادکے ہاتھوں قتل ہونے والے 2بچوں کے باپ کے قاتلوں کو گرفتار نہیں کیاجاسکا۔قتل کر نے والوں کے ساتھی نے غلط نام بتایا، ملزمان کو جلد گرفتار کر لیں گے، انچارج انویسٹی گیشن۔ تفصیلات کے مطابق سول لائن کے علاقہ میں واقع پیلس ہو ٹل میں راوی روڈ کا رہائشی زاہد بطور منیجرکام کر تا تھا۔ چنددن قبل ہو ٹل میں نامعلوم افراد آئے جو شراب کے نشے میں دھت تھے، انہوں نے کمرہ کر ائے پر حاصل کر نا چاہا۔ زاہد نے ان سے شناختی کارڈ ما نگا جس پر ملزمان نے اندھادھند فائرنگ کر کے اس کو شدید زخمی کر دیا جس کوفوری طبی امداد کے لیے میو ہسپتال لے جایاگیاجہاں وہ زخموں کی تاب نہ لا تے ہو ئے دم توڑ گیا۔مقتول کے بھتیجے اور سالے نے روز نامہ ’’پاکستان‘‘ سے گفتگو کر تے ہو ئے بتایا کہ مقتول دو بچوں کا باپ تھا۔ملزمان میں سے ایک نے اپنا نام شاہد بٹ بتایا تھالیکن پو لیس ابھی تک ملزمان کو گرفتار نہ کر سکی ہے ۔ اعلیٰ حکام سے اپیل ہے کہ ملزمان کو فوری گرفتار کر کے ہمیں انصاف فراہم کیا جا ئے۔

مزید : علاقائی