نوجوان بھارتی لڑکی کو پانی پلا کر شرمناک حرکت

نوجوان بھارتی لڑکی کو پانی پلا کر شرمناک حرکت
نوجوان بھارتی لڑکی کو پانی پلا کر شرمناک حرکت

نئی دلی (نیوز ڈیسک) بھارت میں خواتین کی عصمت دری کے واقعات نہایت بڑے پیمانے پر جاری ہیں مگر اب مجرموں نے خواتین پر حملہ آور کرنے کیلئے نئے نئے طریقے بھی بناناشروع کر دیئے ہیں۔

وہ انوکھی ترین خاتون جو15 سال سے بھوک ہڑتال پر ہے کیونکہ۔۔۔

ممبئی شہر کے علاقے مشرقی باندرہ میں ایک 22 سالہ لڑکی شام کے وقت اپنے گھر کی طرف جا رہی تھی کہ اسے چھینکیں آتی دیکھ کر ایک ادھیڑ عمر خاتون نے اسے پانی کی بوتل پیش کی۔ لڑکی نے کچھ ہچکچاہٹ کے بعد پانی کے چند گھونٹ پی لئے اور فوری طور پر ہی اس کا سر چکرانا شروع ہو گیا۔ لڑکی نے پولیس کو بتایا کہ اسی دوران وہاں ایک کار آ کر رکی جس میں دو مرد سوار تھے اور اسے کار میں ڈال لیا گیا۔ صبح کے وقت جب اسے ہوش آیا تو وہ ایک کوڑا دان میں پڑی تھی اور اس کے جسم پر نوچنے اور کاٹنے کے نشانات تھے۔ لڑکی کو اس کے بتائے گئے پتے پر اس کے گھر پہنچایا گیا اور اس کے والدین نے پولیس کو رپورٹ لکھوائی۔ باندرہ کے تھاتھا ہسپتال میں لڑکی کے معائنے کے بعد عصمت دری کی تصدیق کر دی گئی۔ پولیس کا کہنا ہے کہ متعدد مشکوک افراد کو گرفتار کر لیا گیا ہے تاہم تاحال مجرم کا پتہ نہیں چل سکا۔

مزید : جرم و انصاف

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...