بیٹنگ باؤلنگ فیلڈنگ سب ناکام،کیویز کے ہاتھوں گرین شرٹس کو 70رنز سے مات

بیٹنگ باؤلنگ فیلڈنگ سب ناکام،کیویز کے ہاتھوں گرین شرٹس کو 70رنز سے مات

  

ولنگٹن(این این آئی)تین ایک روزہ میچوں کی سیریز کے پہلے ون ڈے میں نیوزی لینڈ نے پاکستان کو 70 رنز سے شکست دیکر سیریز میں ایک صفر کی برتری حاصل کر لی ہے ٗ نیوزی لینڈ کی جانب سے دئے گئے 281رنز کے ہدف کے تعاقب میں پاکستانی ٹیم 46ویں اوورز 210رنز پر ڈھیر ہوگئی ٗ100 سے بھی کم اسکور پر نیوزی لینڈ کے چھ کھلاڑی پویلین لوٹ چکے تھے ٗ ہنری نکولز اور مچل سینٹنر نے بغیر کسی دباؤ کے شاندار بلے بازی کا مظاہرہ کرکے ٹیم کو سنبھالا ٗ پاکستان کی جانب سے بابر اعظم 62رنز کے ساتھ نمایاں رہے ٗنیوزی لینڈ کے ٹرینٹ بولٹ نے 4 اورگرانٹ ایلیٹ نے 3 پاکستانی بلے بازوں کو پویلین کی راہ دکھائی ٗ ہنری نکولز کو82 رنز کی شاندار اننگزکھیلنے پر مین آف دی میچ قرار دیا گیا ٗدونوں ٹیموں کے درمیان دوسرا ون ڈے میچ 28 جنوری کو نیپئر میں کھیلا جائیگا ۔ولنگٹن کے بیسن ریزرو گراؤنڈ میں کھیلے گئے میچ میں پاکستان کرکٹ ٹیم کے کپتان اظہر علی نے ٹاس جیت کر میزبان نیوزی لینڈ کی ٹیم کو پہلے بیٹنگ کی دعوت دی نیوزی لینڈ نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے مقررہ 50 اوورز میں 8 وکٹوں کے نقصان پر 280 رنز بنائے۔ میزبان ٹیم کو آغاز میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑا اور 25 کے مجموعی اسکور پر اس کے 2 کھلاڑی پویلین لوٹ گئے ٗمارٹن گپٹل 11 رنز بنا کر محمد عرفان کا نشانہ بنے ٗ ٹام لیتھم کو ساڑھے پانچ سال بعد ایک روزہ میچ میں واپس لوٹنے والے محمد عامر نے 11 کے انفرادی اسکور پر پویلین واپس بھیجا۔دونوں اوپنرز کے آؤٹ ہونے کے بعد کیوی کپتان کین ولیمسن اور ہنری نکولز نے ٹیم کی کمان سنبھالی، لیکن 70 کے مجموعی اسکور پر کین ولیمسن بھی ہار مان گئے اور 10 رنز بنا کر انور علی کی گیند پر کلین بولڈ ہوگئے۔گرانٹ ایلیٹ کو بھی انور علی نے کریز پر بالکل نہ ٹکنے دیا اور بغیر کوئی رن بنائے بولڈ کرکے پویلین واپس بھیج دیا۔93 کے مجموعی اسکور پر کورے اینڈرسن 10 رنز بنا کر محمد عامر کی گیند پر وکٹوں کے پیچھے نشانہ بنے، 5 رنز بنانے والے وکٹ کیپر بیٹسمین لوک رونکی کو بھی محمد عامر نے آؤٹ کیا اور یوں 100 سے بھی کم اسکور پر نیوزی لینڈ کے چھ کھلاڑی پویلین لوٹ چکے تھے تاہم ایسی صورتحال میں بھی ہنری نکولز اور مچل سینٹنر نے بغیر کسی دباؤ کے شاندار بلے بازی کا مظاہرہ کیا اور تیزی سے رنز بناتے ہوئے ٹیم کے اسکور کو 178 تک پہنچا دیاجس کے بعد مچل سینٹنر 48 رنز کی عمدہ اننگز کھیلنے کے بعد محمد عرفان کی گیند پر وکٹوں کے پیچھے سرفراز احمد کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوئے۔مچل سینٹنر کے آؤٹ ہونے کے بعد میٹ ہنری کریز پر آئے اور ہنری نکولز کے ساتھ مل کر ٹیم کے اسکور کو آگے بڑھانا شروع کیا، تاہم پھر ہنری نکولز 82 رنز کی شاندار اننگز کھیل کر انور علی کی گیند پر بولڈ ہوگئے۔میٹ ہنری اور مچل مک کلینگن نے جارحانہ بیٹنگ جاری رکھی اور رنز بناتے رہے کیوی بلے بازوں نے آخری چھ اوورز میں 70 رنز بناکر ٹیم کے اسکور کو 280 رنز تک پہنچایا۔میٹ ہنری 48 رنز کی جارحانہ اننگز کھیل کر ناٹ آؤٹ رہے، مچل مک کلینگن 31 بنا کر انور علی کی گیند پر زخمی ہونے کے باعث ریٹائرڈ ہرٹ ہوگئے، ٹریٹ بولٹ بھی 4 رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہے۔ نیوزی لینڈ کی جانب سے دیئے گئے 281 رنزکے ہدف کے تعاقب پاکستان کی پوری ٹیم 210 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئی۔ پاکستان کی جانب سے اننگز کا آغاز کپتان اظہر علی اور احمد شہزاد نے کیا تاہم ایک بار پھر پاکستانی اوپنرز ٹیم کو اچھا آغاز فراہم کرنے میں ناکام رہے اور گرین شرٹس کو پہلا نقصان اظہر علی کی صورت میں ہوا جب وہ گرانٹ ایلیٹ کی گینڈ پر چھکا لگانے کی کوشش میں 19 رنز بنا کر آؤٹ ہوگئے، 37 کے مجموعی اسکور پر احمد شہزاد بھی 13 رنز بنا کر ایلیٹ ہی کا شکار بنے۔ دونوں اوپنرز کے جلد آؤٹ ہونے کے بعد محمد حفیظ اور بابر اعظم نے ٹیم کو سہارا دیا اور 81 رنز کی شراکت قائم کی ، تاہم پھر محمد حفیظ 42 رنز بنا کر کین ولیمسن کا نشانہ بنے ۔ جس کے بعدصہیب مقصود بھی ایک بار پھر ناکام ہوئے اور 142 کے مجموعی اسکور پر اپنی گنوا بیٹھے ٗوہ 10 رنز بنا سکے ٗ بابر اعظم بھی 62 رنز بنا کر پویلین لوٹ گئے، عماد وسیم ایک رن بنا کر سینٹنر کی گیند پر وکٹوں کے پیچھے کیچ آؤٹ ہو گئے۔ سرفراز احمد 30 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے ٗ ا نور علی بھی 16 رنز بنا سکے۔

نیوزی لینڈ کی جانب سے ٹرینٹ بولٹ نے 4، گرانٹ ایلیٹ نے 3 جب کہ سینٹنر، اینڈرسن اور کین ولیمسن نے ایک ایک وکٹ حاصل کی۔ٗ ہنری نکولز کو82 رنز کی شاندار اننگزکھیلنے پر مین آف دی میچ قرار دیا گیا۔دونوں ٹیموں کے درمیان دوسرا ون ڈے میچ 28 جنوری کو نیپئر میں کھیلا جائیگا جبکہ تیسرا اور آخری ون ڈے کرکٹ میچ 31 جنوری کو آکلینڈ میں کھیلا جائیگا۔

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -