علامہ امداد قادری کی بلا جواز گرفتاری پر علماء کونسل کا ہنگامی اجلاس

علامہ امداد قادری کی بلا جواز گرفتاری پر علماء کونسل کا ہنگامی اجلاس

  

لاہور(نمائندہ خصوصی)منہاج القرآن علماء کونسل کے مرکزی صدر علامہ امداد اللہ قادری کی بلا جواز گرفتاری کے خلاف علماء کونسل کا ہنگامی اجلاس مرکزی سیکرٹریٹ ماڈل ٹاؤن میں نائب ناظم اعلیٰ تحریک منہاج القرآن علامہ سید فرحت حسین شاہ کی صدارت میں منعقد ہوا،اجلاس میں علامہ امداد اللہ قادری کی گرفتاری کی شدید ترین الفاظ میں مذمت کی گئی ،اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے علامہ فرحت حسین شاہ نے کہاکہ دہشتگردوں کے سر پرست حکمران امن کا نعرہ لگانے والوں کو ہراساں کر رہے ہیں ،حکومت پنجاب پولیس گردی سے سیاسی حریفوں کو دبانا چاہتی ہے ،علامہ امداد اللہ قادری کی گرفتاری ریاستی دہشتگردی کی انتہا ہے ،پر زور مذمت کرتے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ اقتدار پر قابض شریف برادران پولیس کے ذریعے سیاسی مخالفین پر جعلی مقدمات بنا کر بلا جوا ز گرفتاریاں کروا رہے ہیں جو قابل مذمت رویہ ہے ۔

،موجودہ حکمرانوں نے ہمیشہ پولیس ،عدالتوں سمیت حکومت کے ماتحت اداروں کو سیاست میں ملوث کر کے انکی ساکھ کو نقصان پہنچایا ہے۔

،ریاستی اداروں کو انتقامی سیاست کیلئے استعمال کرنا ملک کو انتشار اور تصادم کی طرف دھکیلنا ہے ،علامہ فرحت شاہ نے مطالبہ کیا کہ چادر اور چار دیواری کی حرمت کو پامال کرنے والے کرپٹ پولیس اہلکاروں کے خلاف کارروائی کی جائے ۔حکمرانوں کے ایما پر پولیس اہلکاروں نے انسانی حقوق کی پامالی کو معمول بنا رکھا ہے ،انہوں نے کہاکہ چور ،ڈاکو،دہشت گرد اور ملک کو لوٹنے والے سرعام دندناتے پھر رہے ہیں جبکہ پولیس نہتے ،معصوم اور محب وطن شہریوں پر مظالم ڈھا رہی ہے ،فرحت شاہ نے کہاکہ ریاستی دہشت گردی پر چپ نہیں بیٹھیں گے ۔اگر حکمران ایسی اوچھی حرکتوں سے بازنہ آئے تو سڑکوں پر دما دم مست قلندر ہو گا ۔اجلاس میں علامہ میر آصف اکبر، علامہ محمد حسین آزاد الازھری ،علامہ عثمان سیالوی، علامہ غلام اصغر صدیقی،علامہ لطیف مدنی،علامہ فیاض بشیر ،مفتی خلیل احمد،علامہ رفیق رندھاوا،علامہ عبد الحمید سیالوی و دیگر علماء کرام نے شرکت کی ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -