امریکی صدرکا پاکستان سے ڈور مور کا تقاضا زیادتی ہے،ساجدمیر

امریکی صدرکا پاکستان سے ڈور مور کا تقاضا زیادتی ہے،ساجدمیر

  

لاہور (نمائندہ خصوصی) امیر مرکزی جمعیت اہل حدیث پاکستان سینیٹر پروفیسر ساجد میر نے کہا کہ پاکستان میں بھارتی مداخلت کے ثبوت اقوام متحدہ کو دیے امریکی صدراس پر خاموش کیوں ہیں؟۔ افغانستان میں امریکہ اور اتحادی افواج کے انخلاء کے بغیر امن قائم نہیں ہو سکتا ۔ امریکی صدر اوباما کا پاکستان سے ڈور مور کا تقاضاسراسر زیادتی ہے۔ دہشت گردی عالمی خطرہ ہے جس کیخلاف کارروائی میں کسی ملک کو کوئی امتیاز نہیں رکھنا چاہئے۔ اس امر کا اظہارمرکزی انہوں نے مرکزی دفتر106 راوی روڈ میں مرکزی جمعیت اہل حدیث کویت کے امیر مولانا عارف جاوید محمدی کی قیادت میں ملنے والے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ امریکہ بھول گیا ہے کہ نائن الیون واقعہ کے بعد سب سے زیادہ پاکستان کا نقصان ہوا ہے، بھارت کا تو ایک پتا تک نہیں ٹوٹا پاکستان میں دہشتگردی کے نام پر ساٹھ ہزار کے لگ بھگ سویلین، فوجی پولیس اہلکاربچے بوڑھے اور عورتیں شہید ہو چکے ہیں سات لاکھ سے زائد افراد گھروں سے بے گھر ہوچکے ہیں ۔دریں اثناء انہوں نے آرمی چیف کی طرف سے مدت ملازمت میں توسیع کی ازخود معذرت کو خوش آئند قراردیا ہے اور کہا ہے کہ توسیع کی روایت اب ختم ہونی چاہیے۔ افراد آتے جاتے رہتے ہیں۔ کسی ادارے کے لیے کوئی بھی کبھی ناگزیر نہیں ہوتا۔ ہماری فوج میں سپہ سالاری کی صلاحیت کے حامل جرنیلوں کی کمی نہیں۔اس لیے آرمی چیف کی مدت ملازمت کی توسیع کو ایشو نہیں بنانا چاہیے۔

ساجدمیر

مزید :

علاقائی -