قوم دہشتگردوں کیخلا ف اٹھ کھڑی ہو ،فضل محمد خان

قوم دہشتگردوں کیخلا ف اٹھ کھڑی ہو ،فضل محمد خان

  

بونیر(ڈسٹرکٹ رپورٹر)پاکستان تحریک انصاف کے سابق صوبائی ار گنائزر فضل محمد خان نے کہا ہے کہ صوبے میں 64ہزار تعلیمی ادارے ہیں اور اس وقت صوبے میں پولیس فورس کی تعداد 70ہزار ہے سب کو سیکورٹی دینا ممکن نہیں۔مستقل اور پائدار امن کے قیام کے لئے ضروری ہے کہ قوم دہشت گردوں کے خلاف اٹھ کھڑی ہو اور دہشت گردی کے خاتمہ کے لئے پولیس سمیت سیکورٹی اداروں اور حکومت سے تعاون کر یں۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے باچا خان یونیورسٹی چارسدہ پر دہشت گردوں کے حملے میں شہید کوریا بونیر کے طالب علم ساجد حسین کے والد اور خاندان سے تعزیت کے موقع پر اظہار خیال کر تے ہوئے کیا۔اس موقع پر صدر یواے ای میر حسن خان،سابق ضلعی صدر امیر الامان خان ،ڈسٹرکٹ کونسل کے اپوزیشن لیڈر حاجی صدیق اللہ،ممبر ڈسٹرکٹ کونسل افسر خان،بختیار علی خان،سابق ضلعی ارگنائزر اقبال خان،جمشیر خان،شمشاد علی،شاہ حسن ایڈوکیٹ،سلطان زیب ایڈوکیٹ اور دیگر بھی موجود تھے۔فضل محمد خان نے مذید کہا کہ واقعہ کا سن کر خود دہشت گردوں کے خلاف بندوق اٹھائی اور یونیورسٹی پہنچا جس کے دیکھا دیکھی عوام نے بھی اسلحہ اٹھا یا اور موقع پر پہنچ گئے ۔انہوں نے کہا کہ عوام اور سیکورٹی فورسز کے جوان مردی کی وجہ سے نقصان کم سے کم ہوا ورنہ دہشت گر د ہمیں زیادہ سے زیادہ نقصان پہنچانے ائے تھے۔اس موقع پر انہوں نے شہید ساجد حسین اور سانحہ میں شہادت نوش کر نے والے افراد کے لئے فاتحہ خوانی کی اور کہا کہ اللہ نے ساجد حسین کو جو شہادت کا جو مر تبہ دیا ہے میں اللہ سے دعا کر تا ہو کہ اللہ ہمیں بھی ایسی شہادت کی موت دے۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -