منظورقادرکے ریڈوارنٹ کیلئے نیب نے چیئرمین سے اجازت مانگ لی

منظورقادرکے ریڈوارنٹ کیلئے نیب نے چیئرمین سے اجازت مانگ لی
منظورقادرکے ریڈوارنٹ کیلئے نیب نے چیئرمین سے اجازت مانگ لی

  

کراچی(این این آئی)قومی احتساب بیورو(نیب) سندھ نے اربوں روپے کی کرپشن کے الزام میں ملوث منظور قادر کے ریڈ وارنٹ کے لئے نیب کے چیئرمین سے اجازت مانگ لی ہے۔ذرائع نیب سندھ کے مطابق منظور کاکا پر جائیداد کی فروخت ،غیر قانونی طریقے سے پیسہ کمانے،8برس تک جعلی پاسپورٹ پر کینیڈا کا سفر کرنے سمیت کرپشن کے کئی الزامات ہیں،ان کے ریڈ وارنٹ کے حصول کیلئے نیب چیئرمین سے اجازت مانگ لی گئی ہے۔ذرائع کے مطابق نیب سندھ کی جانب سے چیئرمین نیب سے منظور قادر کو پاکستان لانے کے لئے ریڈ وارنٹ کے اجرا کی اجازت مانگی ہے، ریڈ وارنٹ کے لئے منظور قادر کے خلاف اربوں روپے کی کرپشن کے شواہد موجود ہیں۔نیب کی جانب سے جو تحقیقات کی جارہی ہیں ان شواہد کے مطابق منظور کاکا منی لانڈرنگ میں بھی ملوث رہے ہیں جبکہ جائیداد کی فروخت اور غیر قانونی طریقوں سے کمائے گئے50 ارب کینیڈا اور امریکا بھیجے ہیں،وہ جعلی پاسپورٹ پر8برس تک کینیڈا کا سفر کرتے رہے ہیں۔شواہد پر مبنی دستاویز کے مطابق منظور قادر ایک پروجیکٹ کی منظوری کے لئے 50 لاکھ سے ایک کروڑ روپے تک لیتا تھا، یہی نہیں بلکہ کلفٹن بلاک 3 میں 7 ارب مالیت کی گلیوں اور شاہراہوں کا اسٹیٹس بھی تبدیل کیا گیا تھا۔

مزید :

کراچی -