بدھلہ سنت ‘ پولیس تشدد سے شہری جاں بحق ‘ ورثا کا الزام ہے ‘ ایس آئی گرفتار

بدھلہ سنت ‘ پولیس تشدد سے شہری جاں بحق ‘ ورثا کا الزام ہے ‘ ایس آئی گرفتار

ملتان ( وقائع نگار) ملتان میں دو ہفتوں کے دوران پولیس گردی کا دوسرا واقعہ سامنے آگیا، چھاپے کے دوران پولیس تھانہ بدھلہ سنت کے تشدد سے نعمت علی نامی شخص جاں بحق ہوا ورثا نے الزام عائد کر دیا،پولیس نے واقعہ کے دو مقدمات درج کر کے اے ایس آئی کو گرفتارکر لیا،جاں بحق ہونے (بقیہ نمبر41صفحہ12پر )

والے شخص کی لاش کو پوسٹ مارٹم کے لئے نشتر اسپتال منتقل کر دیا گیا،تفصیل کے مطابق دو ہفتوں کے دوران ملتان میں پولیس گردی کا ایک اور واقعہ سامنے آ گیا، بدھلہ سنت میں پولیس نے علی الصبح منشیات کے مقدمے میں ملوث ملزم اسد کی گرفتاری کے لئے اسلام پور گجراں میں چھاپہ مارا، اور زیر حراست ملزم اسد کو چھڑوانے کیلئے نعمت علی نامی شخص نے پولیس سے مزاحمت کی۔اے ایس آئی اصغر تھانہ بدھلہ سنت کے تشدد سے نعمت علی نامی شخص جاں بحق ہو گیا،ورثاء نے الزام عائد کیا کہ وہ گھر میں سو رہے تھے کہ اے ایس آئی اصغر نے 3 پولیس کانسٹیبل کے ہمراہ ان کے گھر پر دھاوا بول دیا او تشدد شروع کر دیا سر پر پسٹل کا بٹ لگنے سے نعمت علی دم توڑ گیا،پولیس نے حبیب اللہ نامی شخص کی درخواست پر قتل کی دفعات شامل کرتے ہوئے مقدمہ درج کر لیا اور اے ایس آئی اصغر کو گرفتار کر لیا، دوسری جانب ایس ایچ او تھانہ بدھلہ سنت کے مطابق ملزمان منشیات فروشی کے مقدمات میں ملوث ہیں گرفتاری کے لئے چھاپہ مارا تو ملزمان نے ہوائی فائرنگ کر دی،نعمت علی جو کہ دل کا مریض تھا دل کا دورہ پڑنے سے دم توڑ گیا،پولیس نے تحقیقات کا دائرہ کار وسیع کرتے ہوئے لاش کو پوسٹمارٹم کے لئے نشتر اسپتال منتقل کر دیا،پوس مارٹم کے بعد جاں بحق ہونے کی وجہ معلوم ہو سکے گی،واضح رہے کہ چند روز قبل بھی پولیس تشدد سے قادرپورراں کا ایک رہائشی جاں بحق ہو چکا ہے،اس حوالے سے جب سی پی او ملتان عمران محمود سے بات کی تو انہوں نے بتایا کہ ورثا کی درخواست پر مقدمہ درج کر لیا گیا ہے،واقعہ کی تحقیقات کے لئے ایس ایس پی آپریشن محمد کاشف اسلم کی سربراہی میں تحقیقاتی ٹیم بنا دی ہے جو میرٹ پر تفتیش کرے گی.

ہلاک

مزید : ملتان صفحہ آخر