سیکنڈ ائیر کی طالبہ کے اغواء کا معمہ 4ماہ بعد بھی حل نہ ہو سکا

سیکنڈ ائیر کی طالبہ کے اغواء کا معمہ 4ماہ بعد بھی حل نہ ہو سکا

لاہور(نامہ نگار)سیکنڈ ائیر کی طالبہ کے اغواء کا معمہ 4ماہ بعد بھی حل نہ ہو سکا ،لڑکی کے والدین ملزم کی درخواست ضمانت خارج کرانے سیشن عدالت پہنچ گئے ۔عدالت میں طالبہ کی والدہ انیلہ بی بی نے موقف اختیار کیا کہ ملزمہ کومل ابرار نے اپنے ساتھیوں کے ساتھ مل کر اس کی بیٹی کو دھوکہ سے اغواء کیا ،ملزمہ کومل میری بیٹی کی دوست بنی ہوئی تھی اس نے میری بیٹی کسی گروہ کو فروخت کر دی گئی ہے یا قتل ہو چکی ہے کچھ پتہ نہیں،4 ماہ سے ہم بچی کو تلاش کر رہے ہیں ،متاثرہ والدین نے الزام عائد کیاہے کہ ملزمہ کومل ابرار، فاطمہ، بسمہ اور سجاد نواز کا گینگ لڑکیوں کو نوکری کا چھانسہ دے کر اغواء کرتے ہیں اور پھر غلظ لوگوں کو فروخت کر دیتے ہیں تھانہ قلعہ گوجر سنگھ پولیس نے ملزمان کیخلاف اغواء کا مقدمہ درج کررکھاہے، ملزم کومل ابرار اور دیگر کی جانب سے قبل از گرفتاری ضمانت خارج کی جائے جس پرایڈیشنل سیشن جج ثمینہ اعجاز چیمہ نے پولیس سے6 فروری تک معاملے کی رپورٹ طلب کر لی ہے۔

مزید : علاقائی