بجلی کا بریک ڈاؤن ، 80فیصد سے زائد علاقہ محروم ، سندھ اسمبلی کی بجلی بھی منقطع

بجلی کا بریک ڈاؤن ، 80فیصد سے زائد علاقہ محروم ، سندھ اسمبلی کی بجلی بھی منقطع

  



کراچی(اسٹاف رپورٹر )شہر قائد میں جمعہ کو ایک بار پھر بجلی کے بڑے بریک ڈاؤن کے باعث شہر کا 80 فیصد علاقہ بجلی سے محروم ہوگیا ، بجلی بحران کے سبب سندھ اسمبلی کی بجلی بھی منقطع ہوگئی تاہم 4گھنٹوں کی جدوجہدکے بعد بیشترعلاقوں میں بجلی بحال کردی گئی ۔تفصیلات کے مطابق جامشورو سے بجلی کی سپلائی معطل ہونے سے کے الیکٹرک کاسسٹم بیٹھ گیا، جس کے باعث شہر کے 80 فیصد سے زائد علاقے میں بجلی کی فراہمی معطل ہوگئی۔شہر بھر کے تمام انڈسٹریل ایریا بجلی سے محروم جبکہ لانڈھی، کورنگی، بلدیہ ، ڈیفنس، کلفٹن، لیاقت آباد، ملیر، شاہ فیصل،ناظم آباد،گلشن اقبال،گلستان جوہر،گلشن معمار، گڈاپ، نارتھ کراچی، نیوکراچی سمیت بیشترعلاقوں میں بجلی غائب ہوگئی۔ذرائع کے مطابق نیشنل گرڈ میں ٹرپنگ کے باعث کراچی سمیت سندھ اور بلوچستان کے بیشتر علاقوں میں بجلی کا بریک ڈاؤن ہوگیا ۔کراچی اور بلوچستان کے ضلع لسبیلہ میں بجلی کی تقسیم کارکمپنی کے الیکٹرک کے ترجمان نے بتایا کہ قومی گرڈ میں ٹرپنگ کے باعث سندھ کے بیشتر علاقوں کی طرح کے الیکٹرک کا سسٹم بھی متاثر ہوا ہے مگرآئی لینڈ موڈ میں جانے کے باعث نیٹ ورک محفوظ ہے، بجلی کی جزوی بحالی کا عمل شروع کیا جا چکا ہے۔ صارفین سے تعاون کی درخواست کرتے ہیں اور پریشانی پر معذرت خواہ ہیں۔بلوچستان میں بجلی کی تقسیم کار کمپنی کیسکو کے ترجمان نے بھی بجلی کی فراہمی میں خلل کی تصدیق کرتے ہوئے کہا ہے کہ گدو اوچ ٹرانسمیشن لائن میں فنی خرابی سے بجلی کی فراہمی معطل ہوئی ہے تاہم صوبائی دارالحکومت کو متبادل ذرائع سے بجلی کی بحالی شروع کر دی گئی ہے۔دوسری جانب واٹر بورڈ کے گھارو، دھابیجی، پپری سمیت دیگر پمپنگ اسٹیشنز پر بھی بریک ڈاؤن ہوا، ترجمان واٹر بورڈکے مطابق بجلی کے تعطل کے باعث کراچی کوپانی کی فراہمی معطل ہوگئی، بجلی بریک ڈاؤن جمعہ کی صبح 9بجکر20منٹ پرہوا۔ترجمان کے الیکٹرک نے بتایاکہ لانڈھی، کورنگی، حب چوکی اور بلدیہ کے علاقوں میں بجلی بحال کردی گئی ہے ۔نیشنل ٹرانسمیشن اینڈ ڈسپیچ کمپنی کے مطابق ٹیم نے کم سے کم وقت میں سندھ اور بلوچستان میں بجلی کی سپلائی بحال کردی ہے۔ کے الیکٹرک کو 500 کے وی گرڈ سٹیشن جامشوراور 500 کے وی این کے آئی (NKI)گرڈ سٹیشن سے بجلی بحال کردی گئی ہے۔ترجمان این ٹی ڈی سی کے مطابق حیسکو کا سسٹم بھی بحال کردیا گیا ہے اور بجلی کی سپلائی جاری ہے۔ انہوں نے بتایا کہ220 کے وی سبی، کوئٹہ ٹرانسمیشن لائن بحال کردی گئی ہے اور کوئٹہ سمیت بلوچستان کے علاقوں کو بجلی کی سپلائی جاری ہے جب کہ حیسکو کے علاقوں میں بحالی کا کام جاری ہے۔سکھر الیکٹرک سپلائی کمپنی(سیپکو)کے مطابق گڈو تھرمل پاور کے یونٹس میں فنی خرابی کے باعث بھی بجلی کی فراہمی فراہمی متاثر ہوئی ہے اور آئندہ چند گھنٹوں میں بجلی مکمل طور پر بحال کردی جائے گی۔

مزید : کراچی صفحہ اول