سانحہ ماڈل ٹاؤن کے ملزمان کو ترقیاں جبکہ سانحہ ساہیوال میں ملوث افراد کو فوری سزائیں، ن لیگ اور پی ٹی آئی میں یہی بنیادی فرق ہے:فیاض الحسن چوہان

  سانحہ ماڈل ٹاؤن کے ملزمان کو ترقیاں جبکہ سانحہ ساہیوال میں ملوث افراد کو ...
  سانحہ ماڈل ٹاؤن کے ملزمان کو ترقیاں جبکہ سانحہ ساہیوال میں ملوث افراد کو فوری سزائیں، ن لیگ اور پی ٹی آئی میں یہی بنیادی فرق ہے:فیاض الحسن چوہان

  


راولپنڈی (ڈیلی پاکستان آن لائن) پنجاب کے وزیر اطلاعات و ثقافت فیاض الحسن چوہان نے کہا ہے کہسانحہ ماڈل ٹاؤن کے ملزمان کو ترقیاں جبکہ سانحہ ساہیوال میں ملوث افراد کو فوری سزائیں، ن لیگ اور پی ٹی آئی میں یہی بنیادی فرق ہے،سانحہ ساہیوال نے  پوری قوم کو ہلا کر رکھ دیا ہے، غم اور سوگ اس کی گھڑی میں متاثرہ خاندان کے شانہ بشانہ کھڑے ہیں،نئے پاکستان میں قانون سے تجاوز کرنے والوں کے لیے کوئی گنجائش نہیں ہے۔

 راولپنڈی آرٹس کونسل میں نوجوان مصوروں کی تصویری نمائش کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے فیاض الحسن چوہان کا کہنا تھا کہ سانحہ ماڈل ٹاؤن اور سانحہ ساہیوال میں بہت فرق ہے،سانحہ ماڈل ٹاؤن میں قتل و غارت گری میں ملوث افراد کو ترقیاں اور تحفظ دیا گیا تھا، سابق وزیر اعلی کے پرنسپل سیکرٹری توقیر شاہ، ڈی سی او محمد عثمان، اور ڈی آئی جی آپریشنز رانا جبار کو ترقی دی گئی،ایس پی ماڈل ٹاؤن کو حکومت کی جانب سے مکمل تحفظ دیا گیا جبکہ سانحہ ساہیوال میں ملوث تمام افراد کو 72  گھنٹے کے اندر اندر سزائیں دی گئیں، ڈی ایس پی سی ٹی ڈی، اور ایس پی سی ٹی ڈی کو معطل کر دیا گیا، ڈی آئی جی سی ٹی ڈی کو عہدے سے برطرف کر دیا گیا اور تمام ملوث ملزمان کو گرفتار کر لیا گیا کیونکہ قانون کی بالادستی عمران خان کی حکومت کا پہلے دن سے وعدہ ہے،نئے پاکستان میں قانون سے تجاوز کرنے والوں کے لیے کوئی گنجائش نہیں۔

 فیاض الحسن چوہان نے کہا کہ وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے ساہیوال کے واقعہ میں جاں بحق خلیل کے خاندان کے لیے دو کروڑ روپے کی مالی امداد کا اعلان کیا ہے جبکہ بچوں کے تمام تر تعلیمی اخراجات بھی پنجاب حکومت اٹھائے گی، خلیل کے اہل خانہ کو تعلیم کے ساتھ میڈیکل کی بھی فری سہولت حاصل ہو گی،وزیر اعظم اور وزیر اعلیٰ پنجاب کو متاثرہ خاندان سے دلی ہمدردی ہے ،ریاست اس خاندان کی کفالت میں کوئی کسر نہیں چھوڑے گی اور متاثرین کے ساتھ انصاف کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان او ر وزیراعلی پنجاب سردار عثمان بزدار  کی قیادت میں ہم خلیل کے بچوں سے یہ عہد کرتے ہیں کے سانحے کے مجرموں کو قرار واقعی سزا دی جائے گی،پی ٹی آئی انصاف کی علمبردار جماعت ہے،ہم سابق حکومت کی طرح جے آئی ٹی رپورٹ کو  صرف دفتری ریکارڈ کی زینت نہیں بنائیں گے بلکہ نامزدملزمان کو ایسی سزا دیں گے جس بعد کوئی پولیس اہلکار وردی کی آڑ لے کر کسی کی جان مال اور آبرو سے نہ کھیل سکے۔ انہوں نے مزید کہا کہ سردار عثمان بزدار  نے واقعے کا فوری نوٹس لیا اور  72 گھنٹے کے اندر اندر ذمہ داروں کے خلاف کاروائی کے اعلان پر عمل درآمد کر کے دکھایا،ہم اس بات پر یقین رکھتے ہیں کہ نئے پاکستان میں قانون سے تجاوز کرنے والوں کے لیے کوئی گنجائش نہیں،حکومت پنجاب انصاف کے وعدے کے ساتھ کھڑی ہے،قانون کی بالادستی عمران خان کی حکومت کا پہلے دن سے وعدہ ہے،عوام  اور میڈیا اس بات کی تسلی رکھے کہ اس سانحے کو ہم ماڈل ٹاؤن کیس اور  نقیب اللہ محسود کے کیس کی طرح طویل نہیں کریں گے  اور نہ اس پر مٹی ڈالیں گے،اس ظلم میں ملوث افراد کوقانونی تقاضے پورے کر کے نشان عبرت بنادیں گے۔

مزید : علاقائی /پنجاب /راولپنڈی