ملک میں گندم موجود، مافیانے بحران بڑھایا، پرنس محی الدین بلوچ

      ملک میں گندم موجود، مافیانے بحران بڑھایا، پرنس محی الدین بلوچ

  



ملتان (سٹی رپورٹر)بق وفاقی وزیر اور بلوچ رابطہ اتفاق تحریک کے قائد پرنس محی الدین بلوچ نے کہا ہے کہ آٹے کا بحران ہمارے ملک میں تمام بحرانوں کا بادشاہ ہے کیونکہ آٹا 22 کروڑ عوام کے پیٹ میں جاتا ہے یہ بحران بنایا گیا ہے ہمارے ملک(بقیہ نمبر23صفحہ12پر)

میں گندم کی کوئی کمی نہیں ہے یہ کالے کام کرنے والوں کا ہے جنھوں نے بیورو کریسی پارلیمانی اور حکومتی نظام کو اپنے کالے روپے سے جادو کر کے مفلوج کر دیتے ہیں اور یہ اس وجہ سے ہے کہ ملک میں کوئی نظام نہیں ہے اور حکمران جو ڈنڈے کے زور پر لائے گئے ہیں عوام اس میں کچھ دخل اندازی نہیں کر سکتی ملکی میڈیا کچھ نہیں کہہ سکتی اور کر بھی نہیں سکتی ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے ایک بیان میں کیا انہوں نے کہا کہ غربت کو ختم کرنے کا جو سلوگن دیا وہ اس کو پورا نہیں کرسکے لہذا انھوں نے سوچا کہ غریبوں کو ہی ختم کردیں ہم کو سوچنا ہو گا کہ ایسا کیوں ہورہا ہے ایسا اس لئیے ہو رہا ہے کہ جس مقصد کے لئیے ملک بنا اسلام کے نام پر مگر یہ نظام یہاں نظر نہیں آتا جن ممالک نے اسلامی نظام کو اپنایا ان میں ترکی ملیشیااور ایران شامل ہیں اور یہ ملک اسلامی نظام کے ثمرات اقتصادی اور دیگر معاملات میں کامیاب ہیں اور عوام خوش ہے ہمارے ملک میں پنجابی سندھی پٹھان اور بلوچ ہیں اور صرف اسلام ہی ہے جو ان کو آپس میں ملا سکتا ہے۔

گندم

مزید : ملتان صفحہ آخر