دلن قوم کا بجلی کی عدم فراہمی کے خلاف احتجاجی گرینڈ جرگہ

      دلن قوم کا بجلی کی عدم فراہمی کے خلاف احتجاجی گرینڈ جرگہ

  



ہنگو (بیورورپورٹ)دلن قوم کا بجلی کی عدم فراہمی کے خلاف احتجاجی گرینڈ جرگہ، بجلی بحالی نہ ہونے کی صورت میں پولیو سے بائیکاٹ سمیت سرکاری تعلیمی ادارے بھی بند کرنے کا فیصلہ،حکومت کو آئل اینڈ گیس سروے بند کرنے کی بھی دھمکی دے دی۔ تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز دلن قوم کی جانب سے بجلی کی عدم دستیابی کے خلاف قومی سطح پر ایک گرینڈجرگے کا انعقاد کیا گیا جس میں علاقائی مشران،سابق ناظمین، علاقہ مکینوں نے کثیر تعداد میں شرکت کی۔ گرینڈ جرگہ سے خطاب کرتے ہوئے علاقائی مشران حاجی ولی،گل صاحب خان، عالم دین، صدار خان،حاجی بت خان،حاجی عبد الرووف و دیگر نے کہا کہ پورے دلن میں پچھلے 22دنوں سے بجلی بند ہے، جس کی وجہ سے علاقہ عوام شدید ازیت اور مشکلات کا شکار ہے  جبکہ کاروباری ذندگی بھی مکمل طور پر مفلوج ہے۔مشران نے کہا کہ دلن واحد قوم ہے جنہوں نے بجلی کی مد میں اب تک لاکھوں روپے جمعہ کرچکے ہیں مگر اس کے باوجود واپڈا دلن سے سوتیلی ماں جیسا سلوک رواں رکھا ہے۔ مشران نے کہا کہ وفاقی پارلیمانی سیکرٹری ایم این اے حاجی خیال زمان اورکزئی نے گزشتہ 20تاریخ کو قوم سے دو دنوں میں بجلی کا مسئلہ حل کرنے کاوعدہ کیا  تھا مگر بجلی مسئلے کا ابھی تک کوئی حل نہیں نکالا گیا۔ مشران نے کہا کہ اگر دلن کے لئے بجلی فراہم نہیں کی گئی تو قومی سطح پر پولیو سے مکمل بائیکاٹ کے ساتھ ساتھ سرکاری تعلیمی اداروں،ہسپتالوں اور سڑکوں کو بندکریں گے جبکہ آئل اینڈ گیس سروے کو بھی روک دیں گے۔ مشران نے مطالبہ کیا کہ ضلعی انتظامیہ،حکومت اور ممبران اسمبلی مذکورہ مسئلے پر دلن قوم کے ساتھ مل بیٹھ بجلی کی فراہمی یقینی بنائیں بصورت دیگرشدید احتجاج کا راستہ اختیار کیا جائے گا۔    

مزید : پشاورصفحہ آخر