سابق وزرائے اعظم نے ٹیکسوں کا پیسہ عیاشیوں پراڑایا، فیاض چوہان

سابق وزرائے اعظم نے ٹیکسوں کا پیسہ عیاشیوں پراڑایا، فیاض چوہان

  



لاہور(این این آئی) صوبائی وزیر اطلاعات فیاض الحسن چوہان نے کہا ہے کہ گزشتہ وزرائے اعظم نے اپنے اپنے دور اقتدار میں عوام کے ٹیکسوں کا پیسہ ”رام رام جپنا پرایا مال اپنا“کے فارمولے کے تحت ذاتی عیاشیوں اور شاہ خرچیوں میں اڑایا، آصف زرداری، نواز شریف، شاہد خاقان عباسی اور یوسف رضا گیلانی نے غریب عوام کے حق پر ڈاکہ ڈالتے ہوئے سرکاری خزانے سے اپنی ذاتی شاہ خرچیاں اور شوق پورے کیے۔ ان خیالات کا اظہار وزیرِ اطلاعات پنجاب فیاض الحسن چوہان نے وزیرِ اعظم عمران خان اور گزشتہ وزریر اعظموں کے بیرون ملک دوروں پر ہونے والے اخراجات کے موازنے سے متعلق ایک ویڈیو پیغام میں کیا۔ تفصیلات سے آگاہ کرتے ہوئے وزیر اطلاعات نے کہا کہ شاہد خاقان عباسی نے 2012 میں ورلڈ اکنامک فورم میں شرکت کے موقع پر چار لاکھ انسٹھ ہزار ڈالرز اور 2018 میں پانچ لاکھ اکسٹھ ہزار ڈالر خرچ کر ڈالے جبکہ 2017 میں میاں نواز شریف نے سات لاکھ باسٹھ ہزار ڈالرز ورلڈ اکنامک فورم کے اجلاس کے دورے پر اڑا دیئے۔ دوسری طرف وزیرِ اعظم پاکستان عمران خان نے صرف 68 ہزار ڈالرز میں ورلڈ اکنامک فورم کے اجلاس میں شرکت پر خرچ کے کے لاکھوں ڈالرز کی بچت کی۔ فیاض الحسن چوہان نے مزید حقائق سے پردہ اٹھاتے ہوئے کہا کہ 2012 میں آصف زرداری نے دورہ نیو یارک پر 13 لاکھ 10 ہزار ڈالرز، نواز شریف نے 2016 میں 11 لاکھ 13 ہزار جبکہ شاہد خاقان عباسی نے 2017 میں دورہ نیو یارک پر 7 لاکھ 5 ہزار ڈالرز اڑا دیئے۔ وزیرِ اعظم عمران خان نے گزشتہ سال صرف ایک لاکھ 62 ہزار ڈالرز میں نیو یارک کا سرکاری دورہ کیا۔ وزیرِ اطلاعات پنجاب فیاض الحسن چوہان نے مزید بتایا کہ 2009 میں اس وقت کے صدر آصف علی زرداری نے واشنگٹن کے سرکاری دورے پر 7 لاکھ 52 ہزار ڈالرز جبکہ نواز شریف نے اپنے دورِ حکومت میں ساڑھے پانچ لاکھ ڈالرز واشنگٹن کا خرچہ کیا۔

فیاض الحسن چوہان

مزید : صفحہ اول