پاکستان میں کرپشن نہیں بڑھی،ٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل کا وضاحتی بیان آگیا

پاکستان میں کرپشن نہیں بڑھی،ٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل کا وضاحتی بیان آگیا
پاکستان میں کرپشن نہیں بڑھی،ٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل کا وضاحتی بیان آگیا

  



اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)پاکستان میںکرپشن میں اضافے سے متعلق رپورٹ پر ٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل کا وضاحتی بیان سامنے آگیا۔چیئرمین ٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل نے کہاہے کہ انڈیکس 2019میں یہ نہیں کہاکہ بدعنوانی بڑھ گئی ہے۔انڈیکس میں شامل ڈیٹاٹرانسپیرنسی انٹرنیشنل کانہیں ہوتا۔کچھ سیاستدانوں ن اور میڈیا نےرپورٹ کو غلط پیش کیا۔ ہررپورٹ میں غلطی کاامکان 2.46فیصد ہوتا ہے۔

رپورٹ میں 13 مختلف ذرائع کے اعدادو شمارشامل ہوتے ہیں،پاکستان کا سکور تینتیس سے کم ہو کر بتیس پر آگیالیکن اس کا یہ مطلب نہیں ہوتا کہ کرپشن بڑھ گئی ہے۔چیئرمین ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل نے کہا غلط بیانی سے پاکستان کی ساکھ کونقصان پہنچ سکتاہے۔جھوٹے اعدادوشمار سے پاکستان کو بدنام کرنے کی کوشش کی گئی۔وضاحتی بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ بدعنوانی کیخلاف حکومتی اقدامات قابل ستائش ہیں، موجودہ حکومت میں نیب کارکردگی بہترہوئی۔

واضح رہے کہ ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل کی رپورٹ پر اپوزیشن کی جانب سے حکومت پر شدید تنقید کی گئی تھی اور الزام لگایا گیا تھا کہ ملک میں عمران حکومت میں کرپشن میں بہت زیادہ اضافہ ہوا ہے۔ دوسری جانب حکومت نے ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل کی شفافیت پر سوال اٹھادیئے تھے۔حکومت نے اسے اپوزیشن کے ساتھ مل کر کی گئی سازش، کچھ سیاستدانوں نے اسے گزشتہ حکومت کے اعدادوشمار جبکہ شیخ رشید نے اس رپورٹ کو بکواس اور جھوٹ لا پلندہ قراردیا تھا۔

مزید : اہم خبریں /قومی