جیکب آباد کے فوڈ گودام سے چالیس کروڑ کی 87ہزار گندم کی بوریاں غائب ہونے کا انکشاف

جیکب آباد کے فوڈ گودام سے چالیس کروڑ کی 87ہزار گندم کی بوریاں غائب ہونے کا ...
جیکب آباد کے فوڈ گودام سے چالیس کروڑ کی 87ہزار گندم کی بوریاں غائب ہونے کا انکشاف

  



جیکب آباد(این این آئی)جیکب آباد کے فوڈ گودام سے چالیس کروڑ کی 87ہزار گندم کی بوریاں غائب ہونے کا انکشاف،ڈی ایف سی اور فوڈ گودام کے انچارج میں حصے کے معاملے پرجھگڑے کے بعدمعاملہ اینٹی کریشن پولیس کے پاس پہنچا۔

تفصیلات کے مطابق جیکب آباد کے اینٹی کرپشن پولیس کے سرکل آفیسر محمد حینف سرکی کی جانب سے سول جج کی سربراہی میں گڑھی خیرو کے فوڈ گودام میں گندم کی بوریوں کے غائب ہونے کی اطلاع پر چند روز قبل چھاپہ لگایا گیا تھا اور موجو گندم کی بوریوں کی گنتی کی گئی جو آج مکمل ہو گئی ہے۔ اس حوالے سے سرکل آفیسر محمد حنیف سرکی نے بتایا کہ محکمہ خوراک کی درخواست پر لگائے گئے گڑھی خیرو کی سرکاری گودام میں گندم کی ایک لاکھ 19ہزار بوریاں موجود تھیں جبکہ 87ہزار بوریاں غائب تھیں  جبکہ گندم کی جو  بوریاں موجود تھیں اُن میں بھی اکثر میں گندم کے بجائے مٹی اور بھوسہ بھرا ہو اتھا،غائب ہونے والی گند م کی بوریوں کی مالیت چالیس کروڑ سے زائد بتائی جاتی ہے،حکام بالا سے اجازت کے بعد واقعہ کا مقدمہ درج کیا جائے گا۔معلوم ہوا ہے کہ ڈی ایف سی جیکب آباد کو گڑھی خیرو کے فوڈ گودام کے انچارج نادر مگسی کی جانب سے حصہ نہیں دیا گیا ،جس پر ڈی ایف سی نے اینٹی کرپشن پولیس کو خود درخواست دی ،اینٹی کرپشن پولیس کا کہنا تھا کہ گندم کی خردبرد میں ملوث افسران کے خلاف مقدمہ درج کرکے کاروائی کی جائے گی

مزید : علاقائی /سندھ /جیکب آباد