حصول علم کا اصل مقصد ملک و ملت اور قوم کی خدمت ہونا چاہئے:مفتی تقی عثمانی

حصول علم کا اصل مقصد ملک و ملت اور قوم کی خدمت ہونا چاہئے:مفتی تقی عثمانی
حصول علم کا اصل مقصد ملک و ملت اور قوم کی خدمت ہونا چاہئے:مفتی تقی عثمانی

  



کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن)مفتی اعظم پاکستان مفتی تقی عثمانی نے کہاہےکہ حصولِ علم کا اصل مقصد ملک و ملت اور قوم کی خدمت ہونا چاہئے مگر بد قسمتی سے علم کامقصدصرف معاش کی بہتری ظاہر کی جارہی ہےجو علم کےساتھ مذاق ہے،جن لوگوں کامقصدعلم فلاح ہو اللہ تعالی اُن کے معاش کو بھی بہتر کرتے ہیں،نوجوان نسل دین و دنیا کی تفریق کو ختم کرنے میں اپنا کردار ادا کرے۔

کورنگی میں بین الصوبائی مقابلوں کی اختتامی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے مفتی محمد تقی عثمانی نے کہا کہ امت اس وقت گروہوں، جماعتوں اور نظریات میں تقسیم ہے،امت کو اس وقت وحدت کی ضرورت ہے اور کوئی ادارہ وحدتِ امت کے لئے کام کر رہا ہو تو اُسے اللہ تعالیٰ کا شکر ادا کرنا چاہئے۔اُنہوں نے کہا کہ  آج کے نونہال ہمارا مستقبل ہیں اور اُمت کا بوجھ انہوں  نے ہی اٹھانا ہے،اِس وقت تمام تعلیمی اداروں میں ایک تصور سامنے آرہا ہے کہ تعلیم صرف پیسہ کمانے کے لئے ہے، اس بیماری نے تعلیم کو برائے مفاد بنادیا ہے اور نوجوان نسل اپنی تمام صلاحیتوں کو اسی پر لگا رہی ہے۔ مفتی اعظم پاکستان نے کہا کہ تعلیم کا مقصد خدمت ہونا چاہئے اور جولوگ یہ مقصد بناتے ہیں اللہ ان کی معاش کو بھی بہتر بناتاہے،نیت اور عمل ٹھیک ہو تو ہم اللہ تعالیٰ ہمارے کام کو عبادت بنادیں گے۔ 

مزید : علاقائی /سندھ /کراچی