راجہ پرویز اشرف کے صبر کا پیمانہ لبریز ،وفاقی حکومت  کو  نااہلی اور نکمے پن کی انتہا قرار دے دیا 

راجہ پرویز اشرف کے صبر کا پیمانہ لبریز ،وفاقی حکومت  کو  نااہلی اور نکمے پن ...
راجہ پرویز اشرف کے صبر کا پیمانہ لبریز ،وفاقی حکومت  کو  نااہلی اور نکمے پن کی انتہا قرار دے دیا 

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سابق وزیراعظم راجہ پرویز اشرف نے کہا کہ پیپلزپارٹی عوامی جماعت ہے،ہمیشہ عوام کےساتھ کھڑے ہیں،عدم اعتماد کے معاملےپر نون لیگ کو منا لیں گے،آج بچے سکولوں میں ہیں اور اساتذہ سڑکوں پر احتجاج کر رہے ہیں، حکومت نے ہر سیکٹر کو تباہ کر کے رکھ دیا ہے،بجلی بریک ڈاؤن ہوا وہ بھی سابق حکومت کا مسئلہ قرار دے دیا گیا ، یہ نااہلی اور نکمے پن کا دور ہے،حکومت اپنا  این آر او کو اپنے پاس رکھے۔

  پارلیمنٹ  کے باہر  میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے پاکستان پیپلزپارٹی کے مرکزی رہنما راجہ پرویز اشرف نے کہا کہ مہنگائی اور بیروزگاری نے عوام کی کمر توڑ دی ہے،آئے روز تیل اور بجلی کی قیمتیں بڑھ رہی ہیں لیکن اِن کے کان پر جوں تک نہیں رینگ رہی، تحریک انصاف والے پارلیمنٹ میں اپوزیشن کو گالیاں دیتے ہیں،یہ کسی سے بات نہیں کرنا چاہتے، بجلی بریک ڈاؤن ہوا وہ بھی سابق حکومت کا مسئلہ قرار دے دیا گیا،حکومت مکمل طور پر ناکام ہو چکی ہے۔

اُنہوں نے کہا کہ ہمارے دور میں بجلی چار روپے فی یونٹ تھی،بتایا جائے کہ کیا آج عام آدمی آسانی سے بل بھر سکتا ہے؟یہ نااہلی اور نکمے پن کا دور ہے، ان کے پاس مانگے ہوئے لوگ ہیں جن کا سیاست سے کوئی واسطہ نہیں،جب ہم عوام کیلئے جدوجہد کرتے ہیں تو یہ این آر او کا کہتے ہیں،حکومت این آر او کو اپنے پاس رکھے،جب ہم چینی کی قیمت پر بات کرتے ہیں تو کہتے ہیں کہ شور کرتے ہیں،اپوزیشن لیڈر بات کرنا چاہتے ہیں تو ان کو مائیک نہیں دیا جاتا ، ہمارے پارلیمانی لیڈر بات کرنا چاہتے ہیں تو انہیں بھی مائیک نہیں دیا جاتا۔

راجہ پرویز اشرف کا کہنا تھا کہ پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ(پی ڈی ایم) نے پہلے دن بات کی تھی کہ ہم تمام آپشنز استعمال کریں گے،ہم کوئی فورم نہیں چھوڑنا چاہتے اور خاص کر پیپلز پارٹی تو ہر فورم پر اِن کو ایکسپوژ کرنا چاہتی ہے، پی ڈی ایم میں مکمل ہم آہنگی ہے ،اپوزیشن اتحاد کےچار فروری کو ہونے والے سربراہی اجلاس میں عدم اعتماد کی تمام تحریکوں پربات ہو گی،ہماری کوشش ہے کہ اپوزیشن جماعتیں ایک پیج پر آ جائیں ،عدم اعتماد کے معاملے پر ہم مسلم لیگ ن کو بھی منا لیں گے۔

سابق وزیراعظم کا کہنا تھا کہ آئے دن نئے آرڈیننس آ رہے ہیں، میڈیکل ٹیچنگ انسٹی ٹیوشنز ریفارمز آرڈیننس(ایم ٹی آئی) کی ایوان سے منظوری نہیں ہونے دیں گے، ایم ٹی آئی آرڈیننس کی ہرسطح پر مخالفت کی جائے گی، پیپلزپارٹی یونیورسٹی کا مکمل تحفظ کرے گی اور ینگ ڈاکٹرز کے ساتھ کھڑی ہے،پاکستان کی عوام اس حکومت کو مزید ایک دن کے لئے بھی برداشت کرنے کے لئے تیار نہیں ہے۔

مزید :

قومی -