میرا فلموں میں اداکاری کرنا معجزہ سے کم نہیں، سجل علی

 میرا فلموں میں اداکاری کرنا معجزہ سے کم نہیں، سجل علی

  

لاہور(فلم رپورٹر)معروف اداکارہ سجل علی نے کہا ہے کہ شادی محبت کی ہو یا ارینج دونوں ہی صورتوں میں وہ ایک رسک ہوتی ہے۔اداکارہ نے امریکی شوبز ویب سائٹ ’ڈیڈ لائن‘ سے اپنی آنے والی فلم ’واٹس لو گاٹ ٹو ڈو وِد اٹ‘ کی پروموشن کے لئے بات کرتے ہوئے سجل علی نے فلم میں کام کرنے کو معجزہ قرار دیا۔سجل علی نے ویب سائٹ کے ہمراہ فلم کی پروڈیوسر جمائمہ خان اور بولی وڈ اداکارہ شبانہ اعظمی کے ساتھ بات کی اور اپنے کردار سے متعلق بھی بتایا۔اداکارہ کا کہنا تھا کہ انہوں نے فلم میں میمونہ نامی پاکستانی لڑکی کا کردار ادا کیا ہے جو ارینج میرج کرکے برطانیہ منتقل ہوجاتی ہیں، جہاں ان کی زندگی میں مختلف واقعات پیش آتے ہیں۔سجل علی نے بتایا کہ انہوں نے کبھی بھی نہیں سوچا تھا کہ وہ شبانہ اعظمی جیسی لیجنڈ اداکارہ کے ساتھ کبھی ایک ساتھ کام کریں گی۔انہوں نے یہ بھی کہا کہ ہدایت کار شیکھر کپور کی ہدایت کار اور جمائمہ خان کی پروڈیوسرشپ میں ان کا کام کرنا معجزہ ہے، کیوں کہ انہوں نے کبھی ان جیسی شخصیات کے ساتھ کام کرنے کا نہیں سوچا تھا۔ایک سوال کے جواب میں انہوں نے بتایا کہ ہولی وڈ اور بولی وڈ فلموں کے برعکس پاکستانی ڈراموں میں خواتین کے کردار زیادہ اہمیت کے حامل ہوتے ہیں۔اسی طرح انہوں نے ایک اور سوال کے جواب میں بتایا کہ انہیں ذاتی طور پر محبت کی شادیاں پسند ہیں، وہ صرف محبت کو پسند کرتی ہیں اور انہیں محبت کی ہی شادیاں اچھی لگتی ہیں۔ساتھ ہی انہوں نے واضح کیا کہ لیکن شادی پسند کی ہو یا پھر ارینج میریج، دونوں ہی صورتوں میں یہ ایک رسک ہوتی ہے۔

سجل علی کی جانب سے شادی کو دونوں ہی صورتوں میں رسک قرار دیے جانے کے بعد ان کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی اور لوگوں نے احد رضا میر کے ساتھ ان کی شادی اور تعلقات پر بھی تبصرے کئے۔

مزید :

کلچر -