ریڈیو سٹیشن لاہور کے صداکاروں اور سٹاف ممبران کا بھر پور احتجاج

 ریڈیو سٹیشن لاہور کے صداکاروں اور سٹاف ممبران کا بھر پور احتجاج

  

لاہور(فلم رپورٹر)ڈائریکٹر جنرل ریڈیو پاکستان طاہر حسن کی انوکھی منطق،لاہور ریڈیو سٹیشن کی تزین وآرائش کے نام پر پرلاکھوں اڑادیے مگر آرٹسٹوں اور کنٹریکٹ سٹاف کو معاوضوں کی مد میں 3ماہ سے سولی پر لٹکا دیا۔صداکاروں اور سٹاف ممبران کا بھر پور احتجاج وزیر اعظم پاکستان محمد شہباز شریف اور و فاقی وزیر اطلاعت و نشریات مریم اورنگزیب سے صورتحال پر نوٹس لینے کی اپیل۔تفصیلات کے کچھ ماہ قبل طاہر حسن کو ڈائریکٹر جنرل ریڈیو پاکستان تعینات کیا گیا جنہوں نے عہدے کا چارج سنبھالتے ہی ریڈیو پاکستان لاہور کا دورہ کیا اوراس کی تزین وآرائش کے لیے مقامی انتظامیہ کو خصوصی فنڈز فراہم کیے۔ذرائع نے مزید بتایا کہ اس وقت حالات یہ ہیں کہ ادارے کے کنٹریکٹ ملازمین کو ۳ماہ سے تنخواہوں کی ادائیگی نہیں کی گئی۔

 جس کے باعث ان کے گھروں میں فاقوں کی نوبت ہے جبکہ اس کے ساتھ صداکار جو اس ادارے کی جان ہیں جن کو پاکستان کی عوام اپنا آئیڈیل گردانتی ہے ان کو بھی 3ماہ سے واجبات ادا نہیں کیے گئے ان صداکاروں میں ایسے لوگ موجود ہیں جن کو حکومت پاکستان کی جانب سے سرکاری اعزازات سے نوازہ جاچکا ہے جو اپنے معاوضوں کے حصول کی خاطر دربدر ہیں ان حالات میں دونوں طبقات وزیر اعظم پاکستان محمد شہباز شریف اور وزیر اطلاعات ونشریات مریم اورنگزیب سے درخواست کی ہے کہ ان کو ان کا جائز حق دلوائیں اور ڈائریکٹر جنرل ریڈیو پاکستان کی جانب سے کی جانے والی مبینہ کرپشن پر نوٹس لیں اور ان سے جواب طلبی کی جائے کہ انھوں نے مہنگائی کے اس دور میں ان طبقات کو ریلیف فراہم کیوں نہیں کیا۔

مزید :

کلچر -