ملک بھر میں مظلوم فلسطینیوں سے اظہار یکجہتی کیلئے یوم عزم اور یوم القدس منایا گیا

ملک بھر میں مظلوم فلسطینیوں سے اظہار یکجہتی کیلئے یوم عزم اور یوم القدس ...

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

اسلام آباد/لاہور/کوئٹہ/پشاور/کراچی/مظفرآباد(سٹا ف ر پورٹر ، بیو ر و رپو رٹ ،اے این این، آ ئی این پی )جماعتہ الدعوۃ،جما عت اسلامی ،سنی تحر یک ،جمعیت علما ئپا کستا ن ،پا کستان علماء کو نسل ،اور انڑنیشنل ختم نبو ت مو و منٹ ،حقو ق اہلسنت ، مجلس وحدت المسلیمین سمیت دیگر مذ ہنی جما عتو ں کی اپیل پر مظلوم فلسطینیوں سے اظہار یکجہتی کے لیے آزاد کشمیر اور گلگت بلتستان سمیت ملک بھرمیں جمعۃ الوداع کو یوم عزم اوریوم القدس کے طور پر منایا گیا،غزہ پراسر ائیلی جارحیت کے خلاف نماز جمعہ کے بعداحتجاجی مظاہرے،ریلیاں وجلسے جلوس،جمعہ کے اجتماعات میں اسرائیلی بربریت کے خلاف مذمتی قراردادیں منظورکی گئی،نہتے فلسطینیوں کے قتل عام پر عالمی برادری بالخصوص مسلمان حکمرانوں کی خاموشی پرکڑی تنقید کی گئی ۔پا ر لیمنٹ ہاؤس سمیت تما م سر کا ری عمارات پر قومی پر چم سر نگو ں رہا ۔تفصیلات کے مطابق جماعت اسلامی کے زیراہتمام جمعۃ الوداع کو یوم عزم کے طورپرمنایاگیا اس موقع پر جماعت اسلامی کے زیراہتمام وفاقی دارالحکومت اسلام آباد ،چاروں صوبائی دارالحکومتوں ، لاہور ، پشاور ، کراچی ، کوئٹہ ، فیصل آباد ، ملتان ، شیخوپورہ ، مظفر آباد سمیت ملک کے چھوٹے بڑے شہروں میں جلسے جلوس اور ریلیاں منعقد کی گئیں جن میں ہزاروں عوام نے شرکت کی اور اسرائیل کی بربریت ، فلسطین کے نہتے مسلمانوں کے قتل عام، عالم اسلام اور اقوام متحدہ کی خاموشی کی شدید مذمت کی گئی ۔ جماعت اسلامی کے مقامی رہنماؤں نے احتجاجی ریلیوں سے خطاب کیا۔لاہور میں منصورہ کے باہر ملتان روڈ پر ہونے والے احتجاجی مظاہرے کی قیادت امیر جماعت اسلامی پاکستان سراج الحق اور سیکرٹری جنرل لیاقت بلوچ نے کی ۔ سراج الحق نے مظاہرے کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے اقوام متحدہ سے مطالبہ کیا کہ نہتے فلسطینی مسلمانوں کے قتل عام پر اسرائیل کو عالمی دہشت گرد ملک قرار دیا جائے اور اقوام متحدہ کی 70 سے زائد امن کی قرار دادوں کو مسترد کرنے پر اسرائیل کی رکنیت خارج کی جائے ۔ سراج الحق نے کہاکہ میں نے اس مسئلے پر گفتگو کے لیے میاں نوازشریف سے بات کرنے کی کوشش کی لیکن مجھے بتایا گیا کہ وہ ملک سے باہر ہیں ۔ انہوں نے کہاکہ جب بھی کوئی براوقت آتاہے نوازشریف ملک سے باہر چلے جاتے ہیں ۔ انہیں قوم کی نمائندگی کرتے ہوئے اسرائیل کے خلاف جرأت مندانہ کردار ادا کرنا چاہیے تھا ۔ حکومت کی طرف سے یوم سوگ کا اعلان قابل ستائش ہے مگر قوم سوال کرتی ہے کہ ایٹمی پاکستان اسی طرح بے بسی اور بے حسی کا مظاہرہ کرتارہے گا ۔سیکرٹری جنرل جماعت اسلامی پاکستان لیاقت بلوچ نے فلسطین کے ساتھ اظہار یکجہتی کے مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ فلسطین کے مسئلہ پر حکمران تذبذب کا شکار ہیں ۔ وزارت خارجہ اسرائیل کو تسلیم کرنے کا عندیہ دے رہی ہے ۔ انہوں نے کہاکہ پاکستان عالم اسلام کا دھڑکتا دل اور نظریاتی مملکت ہے ۔ پاکستان کے حکمرانوں کو امت مسلمہ کو متحد کرنے کی کوشش کرنی چاہیے ۔ مظاہر ے سے خطاب کرتے ہوئے جماعت اسلامی کے ڈائریکٹر امور خارجہ عبدالغفار عزیز نے کہاکہ تینَ ہفتوں سے دنیا کا سفاک ترین قاتل اور مجرم فلسطینیوں پر بمبار ی کررہاہے ۔ ہر گھنٹہ میں ایک شیر خوار بچہ شہید کر دیا جاتاہے ۔ انہوں نے کہاکہ اب صلح اسرائیل کی نہیں فلسطین کی شرائط پر ہوگی اس موقع پر نائب امیرجماعت اسلامی پاکستان حافظ محمد ادریس ، سیکرٹری جنرل پنجاب نذیر احمد جنجوعہ اور جماعت اسلامی پاکستان کے سیکرٹری اطلاعات امیر العظیم بھی موجود تھے ۔ اسلام آباد میں آئی ٹین مر کز میں فلسطین میں اسر ئیل کی جا رحیت اور قتل عام کے خلاف احتجاجی مظا ہر ہ کیاگیا جس سے امیر جماعت اسلامی اسلام آباد زبیر فارو ق خان، نائب امیر جماعت اسلامی اسلام آبادمیاں محمد رمضان ،خالد فارو ق نے خطا ب کیا ۔ شرکاء نے نے اپنے ہاتھوں میں بینرز اور پلے کارڈز اٹھارکھے تھے جن پر اسرائیلی مظالم کی مذمت اور نہتے فلسطینیوں سے یکجہتی کے نعرے درج تھے۔ نائب امیر جماعت اسلامی پا کستان و سابق ممبر قومی اسمبلی میاں محمد اسلم نے اپنے خطاب میں کہاکہ فلسطین فلسطینیوں کا ہے اسرائیل ایک ناجائز ریاست ہے، جو اپنے غاصبانہ قبضے کے ذریعے اہلِ فلسطین کو اقلیت میں بدلنے کی کوشش کررہی ہے ۔احتجاجی مظا ہر ے سے خطاب کر تے ہو ئے امیر جماعت اسلامی اسلام آباد زبیر فارو ق خان نے کہا اب وقت آگیا ہے کہ امت بیدار ہو سب سے زیادہ ذمہ داری سعودی عرب پر بنتی ہے کہ وہ عالم اسلام کی قیادت کرے ۔ فیصل آباد میں نماز جمعہ کے بعد ضلعی امیر انجینئر عظیم رندھاوا، غلام عباس خاں،شیخ محمد مشتاق ،ملک محمد دین اور راناعدنان کی قیادت میں المرکز الاسلامی چنیوٹ بازار سے گھنٹہ گھر تک ریلی نکالی ۔ ریلی کے شرکاء نے بینرزاورکتبے اٹھائے ریلی کے شرکاء نے اسرائیل ،امریکہ اور اقوام متحدہ کے خلاف شدید نعرہ بازی ۔ریلی سے خطاب کرتے ہوئے جماعت اسلامی کے رہنماؤں نے کہا کہ نام نہادعالمی امن کے ٹھیکیدارمحض تماشائی بن کرمسلمانوں کے خون کے ساتھ ہولی کھیلنے کے مناظردیکھ رہے ہیں ۔ ملت اسلامیہ متحدہوکر عالم کفرکامقابلہ کرے اورفلسطینیوں کواسرائیلی مظالم سے نجات دلانے کیلئے میدان عمل آئے۔ امریکہ اوریورپ اسلام اور مسلم دشمن ایجنڈے پر متحدہیں۔عالم اسلام میں فساداورتقسیم درتقسیم کی آگ بھڑکائی جارہی ہے۔بدقسمتی ہے کہ اسلامی ممالک کے حکمران بے حسی، اور تعصبات کاشکارہیں ۔انہوں نے کہاکہ اوآئی سی اورمسلم حکمران بے حسی ترک کریں اورفلسطین ،کشمیر ،برما ، عراق، شام میں جاری ظلم کے سدباب کے لئے کرداراداکریں۔ بلوچستان میں بھی فلسطینی مسلمانوں سے اظہاریکجہتی کیلئے یوم عزم کے موقع پر مختلف مقامات پر مظاہرے ،ریلی وتقاریب منعقد کی گئی ۔جمعہ کی نمازوں کے موقع پر خطبات وتقاریرمیں اسرائیلی مظالم اور مسلم حکمرانوں کی بے حسی کے خلاف قراردادیں پاس کی گئی۔جماعت اسلامی کے صوبائی امیر عبدالمتین اخوندزادہ نے لورالائی میں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اسرائیلی ظلم وستم ،جارحیت اور سفاکی ختم ہونے تک دنیا میں امن قائم نہیں ہوسکتا ۔مسلم حکمران امریکی یہودی غلامی کے بجائے عالم اسلام کی قیادت کریں ۔امت مسلمہ کی نظریاتی دینی تحریکوں کو کچلنے کیلئے بدقسمتی سے مسلم حکمران فعال کردار ادا کرکے دشمن کا کام آسان کررہے ہیں جو کہ امت کی بدقسمتی ہے۔ اصل المیہ مسلم حکمرانوں کی بے حسی اور بے بسی ہے۔ دیگر مقامات پر مظاہرے ،ریلی وتقاریب سے جماعت اسلامی کے صوبائی وضلعی رہنماؤں نے خطاب میں کہا کہ اسرائیلی جارحیت کو امریکی پشت پناہی حاصل ہے۔ مسلم دنیا خاموش تماشائی کاکردار ادا کررہی ہے۔ ادھرجماعۃالدعوۃ پاکستان کی اپیل پربھی اسرائیلی بربریت اور فلسطینی مسلمانوں سے اظہار یکجہتی کیلئے ملک بھر میں احتجاجی مظاہرے کئے گئے اور ریلیاں نکالی گئیں۔ لاہور میں سب سے بڑا پروگرام یونیورسٹی گراؤنڈ میں نماز جمعہ کے بعد القدس ریلی اور چوبرجی چوک میں منعقدہ جلسہ عام تھا جس میں لاہور اور اس کے گردونواح سے ہزاروں افراد نے جوق درجوق شرکت کی اور اسرائیلی جارحیت کے خلاف زبردست غم و غصہ کا اظہار کیا گیا۔ اس موقع پر ہزاروں شرکا ء کی جانب سے اسرائیل کی بربادی تک جنگ رہے گی‘ جنگ رہے گی اور حافظ محمد سعید قدم بڑھاؤ ہم تمہارے ساتھ ہیں کے فلک شگاف نعرے لگائے جاتے رہے۔ چوبرجی چوک میں جلسہ عام سے امیر جماعۃالدعوۃ پاکستان پروفیسر حافظ محمد سعید،تحریک حرمت رسول ؐ کے کنوینر مولانا امیر حمزہ، مولانا سیف اللہ خالد، لاہور بار کے سابق سیکرٹری عبدالطیف سراء ایڈووکیٹ، مولانا ابو الہاشم، مولانا محمد ادریس فاروقی،احسان الہٰی وٹو، بلال احمد چیمہ و دیگر نے خطاب کیا۔ جماعۃالدعوۃ کے سربراہ حافظ محمد سعید نے جلسہ عام اور یونیورسٹی گراؤنڈ میں جمعۃالوداع کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ فلسطینی مسلمانوں کو ظلم سے نجات دلانے اور اسرائیلی درندگی کے خاتمے کے لئے ساری امت پر جہاد فرض ہو چکا ہے ۔فلسطینی مسلمان بھی اسرائیل کے خلاف جہاد کیلئے اٹھ کھڑے ہوں‘ پوری پاکستانی قوم کا بچہ بچہ ان کے ساتھ ہے۔افغان مسلمان امریکہ اور اس کے اتحادیوں کو افغانستان سے بھاگنے پر مجبورکر سکتے ہیں تو اسرائیل بھی ان شاء اللہ فلسطینی مسلمانوں کے سامنے نہیں ٹھہر سکے گا۔ جس طرح اللہ کی مدد یہاں اتری ہے اس کی مدد وہاں بھی آئے گی۔فلسطین، کشمیر، برما، انڈیا اور دیگر خطوں کے مظلوم مسلمانوں کی آزادیوں و حقوق کا تحفظ جہاد فی سبیل اللہ سے ہی ممکن ہے۔ اسی سے دنیا سے ظلم اور فساد کا خاتمہ ہو گا۔بھارتی مسلمانوں کا قتل عام اور بابری مسجد کی جگہ رام مندر کی تعمیرروکنے کا حل بھی یہی ہے۔انہوں نے کہاکہ نواز شریف نے سعودی عرب میں بیٹھ کر احتجاج کی کال دی لیکن میں انہیں اللہ کا پیغام پہنچانا چاہتا ہوں کہ جب کسی خطے کے مسلمان دشمنوں کے ظلم میں ہوں او ر وہ پکار رہے ہوں ۔جس طرح فلسطین کے مسلمان آج پکار رہے ہیں تو پھراللہ حکمرانوں کومظلوم مسلمان بھائیوں کی مدد کا حکم دیتا ہے۔ ایران القدس کے مسئلہ میں پیش پیش رہتا ہے اگر ایران سچا ہے تو اسرائیل پر حملہ کرے یہ سیاست کا وقت نہیں ۔اگر ایران حملہ نہیں کرتا تو ہم سمجھیں گے کہ سیاست کی جا رہی ہے ۔یہ وقت دشمن کے ظلم کو روکنے کا ہے ۔حافظ محمد سعید نے کہاکہ فلسطینی مسلمان اسرائیل کے خلاف میدان میں نکلے ہیں تو اسرائیلیوں کے لاشے تڑپنا شروع ہو گئے ہیں۔ ہم نے اسرائیل سے اپنا قبلہ اول چھڑانا ہے۔ شام او ر عراق میں جو لوگ کفار کی سازشوں کے راستے ہموار کر رہے ہیں اگر وہ جہاد کرنا چاہتے ہیں تو اسرائیلی درندوں کے خلاف جہاد کیلئے کھڑے ہوجائیں۔ انہوں نے کہاکہ یہودی سمجھ چکے ہیں کہ اب انہیں اپنے مظالم کا حساب دینا پڑے گا۔اس لئے وہ حساس علاقوں کونشانہ بنا کر بچوں کا قتل عام کر رہے ہیں۔ وہ سمجھتے ہیں کہ شاید اس طرح وہ بچ جائیں گے ۔ فرعون نے بھی اسی خطرہ کے پیش نظر 80ہزار بچوں کا قتل عام کیا آج اسرائیل بھی وہی ظلم کر رہا ہے اسے خطرہ ہے کہ یہاں سے مسلمان اٹھیں گے جو اس کے وجود کیلئے خطرہ بنیں گے۔قبل ازیں جماعۃالدعوۃ کے زیر اہتمام یونیورسٹی گراؤنڈ میں ہزاروں افراد کے بڑے جم غفیر نے حافظ محمد سعید کی امامت میں نماز جمعہ اد اکی۔ خطبہ جمعہ کے دوران حافظ محمد سعید نے فلسطین، کشمیر، برماو دنیا کے دیگر خطوں کے مظلوم مسلمانوں اور وطن عزیز پاکستان کی سلامتی و استحکام کیلئے دعا کروائی تو اجتماع میں شریک ہزاروں افراد زاروقطار روتے رہے۔ فلسطین میں اسرائیلی مظالم کے تذکرہ پر ہر آنکھ اشکبار نظر آئی۔ جماعۃالدعوۃ کے سربراہ حافظ محمد سعید نے خطبہ جمعہ کے دوران کہاکہ بھارت کا ظلم صرف کشمیر تک محدود نہیں بلکہ پورے بھار ت میں مسلمانوں کا قتل عام کیاجارہا ہے۔ ۔تحریک حرمت رسول ؐکے کنوینر مولانا امیر حمزہ نے کہا کہ اسرائیل نے فلسطینی شہریوں ،ہسپتالوں،سویلین آبادیوں پر حملہ کیا میں پوچھتا ہوں کہ اقوام متحدہ،عالمی عدالت انصاف اورحقوق انسانی کی عالمی تنظیمیں کہاں ہیں؟اب اسرائیل کے خلاف بھی جہاد ہو گا ۔انہوں نے کہا کہ غزہ کے مسلمانوں کی مددوحمایت پوری مسلم امہ پر فرض ہے۔ اسرائیلی اب جنگ بندی کا کہہ رہے ہیں لیکن حماس والے کہتے ہیں کہ اب جنگ بندی ہماری شرائط پر ہو گی ۔انہوں نے کہاکہ اگر یورپی یونین بن سکتی ہے تو اسلامک یونین کیوں نہیں بن سکتی؟ ۔جماعۃالدعوۃ کے مرکزی رہنما مولانا سیف اللہ خالد، لاہور بار کے سابق سیکرٹری عبدالطیف سراء ایڈووکیٹ، مولانا ابو الہاشم، مولانا محمد ادریس فاروقی،احسان الہٰی وٹو، بلال احمد چیمہ و دیگر نے کہاکہ پوری امت مسلمہ فلسطین کے مظلوم مسلمانوں کے ساتھ ہے ۔اسرائیل کے مظالم کے خاتمہ کیلئے جہاد کرنا ہو گا ۔جماعۃالدعو ۃ پاکستان کے زیر اہتمام صوبائی دارالحکومت لاہور کی طرح گوجرانوالہ، فیصل آباد، سیالکوٹ، جہلم، راولپنڈی، اسلام آباد، پشاور، ملتان، کراچی، کوئٹہ، اوکاڑہ، ساہیوال، بہاولپوراور ملک بھر کے دیگر شہروں میں فلسطینی مسلمانوں سے اظہار یکجہتی کیلئے بڑے اجتماعات کا انعقاد کیا گیا۔ جماعۃالدعوۃ کے مرکزی قائدین پروفیسر حافظ عبدالرحمن مکی، تحریک تحفظ قبلہ اول کے کنوینر مولانا محمد شمشاد احمد سلفی، مولانا غلام قادر سبحانی، قاری یعقوب شیخ، انجینئر نوید قمر،مولانا محمد یوسف طیبی، حافظ عبدالرؤف، مولانا بشیر احمد خاکی، قاری گلزار احمد،خالد سیف الاسلام، مولانا محمد یوسف ربانی و دیگر نے بڑے اجتماعات سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ فلسطینی اور کشمیر ی مسلمانوں کی مدد پوری مسلم امہ پر فرض ہے۔ ستائیس رمضان المبارک کو قیام پاکستان کا اعلان ہوا تھا ۔ آج ہم نے اس ملک کو لاالہ الااللہ کی تعبیراور گہوارہ بنانا ہے پھر یہ پاکستان دنیائے اسلام کی قیادت کرے گا۔ پاکستان علماء کونسل اور انٹر نیشنل ختم نبوت موومنٹ پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل صاحبزادہ زاہد محمود قاسمی نے جمعۃ الوداع کے موقع پر مرکزی جامع مسجد گول فیصل آباد میں یوم یکجہتی فلسطین کے موضوع پر خطاب کرتے ہوئے کہاکہ فلسطین میں بے گناہ مسلمانوں کے قتل عام کی اجازت کسی بھی مذہب میں جائز نہیں ہے اقوام متحدہ بھی خاموش تما شائی ہے کسی بھی حکمران میں یہ جرت نہیں ہے کے وہ اسرائیلی مظالم کی مذمت کرے عالمی سطح پر مسلمانوں کے ساتھ نا انصافیاں بڑھتی جارہی ہیں دنیا میں امن و سکوں قائم کرنے کے لیئے اقوام عالم کو مسلمانوں کے خلاف روا رکھے جانے والے مظالم کا نوٹس لینا ہو گا جو اقوام مسلمانوں کے خلاف جنگی جرائم کی مرتکب ہیں انہیں انسانیت کش اقدامات سے باز رہنا ہو گا عالمی سطح پر مسلمانوں کو دہشت گرد شددت پسند قوم باور کرانے کی مہم کبھی کامیاب نہیں ہو سکے گی عراق، افغانستان ،کشمیر اور فلسطین میں مسلمان خود ناانصافی اور دہشت گردی کا شکار ہیں مسلمانوں کے جذبہ حریت اور آزادی کی جد جہد کو بزور قوت دبانے اور کچلنے کی سازشیں کبھی کامیاب نہیں ہونگی مسلمان متحد ہو جائیں۔ دریں اثناء قائد ملت جعفریہ پاکستان اور ملی یکجہتی کونسل پاکستان کے سینئر نائب صدر علامہ سید ساجد علی نقوی کی اپیل پر چاروں صوبوں سمیت آزاد کشمیر اور گلگت بلتستان میں جمعۃ الوداع یوم القدس کے طور پر منایا گیا۔مرکزی القدس کمیٹی اسلام آباد اور صوبائی / علاقائی القدس کمیٹیوں کے سربراہوں اور صوبائی دارالحکومت میں نکالی جانے والی ریلیوں کے شرکاء سے ٹیلی فونک خطاب میں علامہ ساجد نقوی نے کہا کہ عالمی استعمارنے مخصوص مقاصد کے تحت اسرائیل کا فتنہ عالم اسلام کے قلب میں کھڑا کیا اور اسرائیل نے اپنے توسیع پسندانہ عزائم کے تحت قبلہ اول بیت المقدس کو بھی اپنی لپیٹ میں لے لیا۔علامہ ساجد نقوی نے کہا کہ انہی اسرائیلی مظالم وجارحیت اور مسلمانوں کے قبلہ اول پر اسرائیل کے ناجائز تسلط کے خلاف ہر سال پاکستان میں رمضان المبارک کے آخری جمعہ ( جمعتہ الوداع) کو یوم القدس کے طور پر منایا جاتا ہے تاکہ مسلمانوں کو منظم وبیدار کیا جاسکے اور وہ قبلہ اول کی آزادی اور آزاد فلسطینی ریاست کے قیام کی جدوجہد میں اپنا کردار ادا کرسکیں۔یوم قدس کے حوالے سے اسلام آباد میں مرکزی القدس ریلی مرکزی میلوڈی تا آبپارہ چوک نکالی گئی۔ ریلی کی قیادت شیعہ علماء کونسل پاکستان کے مرکزی سیکرٹری جنرل علامہ عارف حسین واحدی نے کی۔ اس موقع پرنائب صدر جماعت اسلامی میاں محمد اسلم، ڈپٹی سیکرٹری جنرل ملی یکجہتی کونسل ثاقب اکبر، سربراہ تحریک اسلام پاکستان مولانا حیدر علوی ،شیعہ علماء کونسل اسلام آباد کے صدرملک تنویر حیدر، راولپنڈی کے صدر مولانا غلام قاسم جعفری، مولانا فرحت عباس جوادی،سید محمد علی واسطی،مولانا نذر عباس شیرازی، مولانا، سید عقیل کاظمی، تطہیر عالم رضوی، سکندر عباس گیلانی، زاہد اخونزاد اور سید محمود نقوی ودیگر نے بھی خطاب کیا۔ ریلی کے اختتام پر اسرائیلی پرچم نذر آتش کیاگیااور اسرائیلی جارحیت کیخلاف متفقہ قراردادیں منظور کی گئیں

مزید :

صفحہ اول -