بجلی کا شارٹ فال 4600میگاواٹ ،سحر و افطار اور تراویح کے اوقات میں لوڈ شیڈنگ بدستورجاری

بجلی کا شارٹ فال 4600میگاواٹ ،سحر و افطار اور تراویح کے اوقات میں لوڈ شیڈنگ ...
بجلی کا شارٹ فال 4600میگاواٹ ،سحر و افطار اور تراویح کے اوقات میں لوڈ شیڈنگ بدستورجاری

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

اسلام آباد(مانیٹرنگ)وزارت پانی و بجلی وعدے کے مطابق رمضان المبارک میں سحر و افطار اور نماز تراویح کے اوقات میں بجلی کی بلا تعطل فراہمی کو یقینی نہ بنا سکی اور ملک بھر میں روزہ دار مقدس مہینے کے آخری عشرے میں مشکلات میں گھرے ہوئے ہیں۔تفصیلات کے مطابق وزارت پانی و بجلی سحر و افطار اور نماز تراویح کے اوقات میں بجلی کی بلا تعطل فراہمی کو یقینی بنانے میں بری طرح ناکام رہی ہے اور رمضان المبارک میں بجلی کی بندش ، کم وولٹیج اور ٹرپنگ کے باعث روزہ دار سخت مشکلات میں گھرے ہوئے ہیں ۔ادھر این ٹی ڈی سی ذرائع کا کہنا ہے کہ ملک میں بجلی کا شارٹ فال 4 ہزار 600 میگا واٹ ہے،مجموعی پیداوار 14 ہزار 320 جبکہ طلب 18 ہزار 920 میگا واٹ ہونے کے بعد شہری علاقوں میں 6 سے 8 اور دیہی علاقوں میں لوڈشیڈنگ کا دورانیہ 14 گھنٹے تک آ گیا ہے۔ جڑواں شہروں راولپنڈی اور اسلام آباد میں کم وولٹیج اور ٹرپنگ کا سلسلہ بدستور قائم ہے جبکہ لاہور میں لو وولٹیج اور ٹرپنگ کے باعث بعض علاقوں میں عین افطار اور سحر کے اوقات بجلی کا چلے جانا معمول بنا ہوا ہے جس کے باعث روزہ دار پریشان ہیں۔ میپکو ریجن میں بجلی کی کل طلب 3420 اور 1900 میگاواٹ بجلی فراہم کی جا رہی ہے اور بجلی کا شارٹ فال 1520میگاواٹ تک آ گیا ہے۔ جنوبی پنجاب کے شہری علاقوں میں 10سے 12 جبکہ دیہی علاقوں میں 12سے 14گھنٹے لوڈ شیڈنگ کی جا رہی ہے۔

مزید :

اسلام آباد -