کراچی سٹاک مارکیٹ ،کاروباری اتار چڑھاؤ کے بعد محدود پیمانے پر مندے کا رجحان

کراچی سٹاک مارکیٹ ،کاروباری اتار چڑھاؤ کے بعد محدود پیمانے پر مندے کا رجحان

 کراچی(اکنامک رپورٹر)کراچی اسٹاک مارکیٹ گزشتہ ہفتہ شدید کاروباری اتار چڑھاؤ کے بعد محدود پیمانے پر مندی کا رجحان رہا ،کے ایس ای 100انڈیکس36ہزار پوائنٹس کی بلند ترین سطح کو چھونے کے بعد 35800پوائنٹس کی سطح پرہی بند ہوا۔گزشتہ کاروباری ہفتے کے تین دن کے دوران کراچی اسٹاک مارکیٹ کے سرمائے میں 24ارب سے زائد روپے کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا جس سے مارکیٹ کا مجموعی سرمایہ 77کھرب روپے سے تجاوز کرگیا۔عید کی تعطیلات کے باعث 3روز تک محدود رہنے والے کاروباری ہفتے کے پہلے روزکراچی میں امن وامان کی صورتحال اور نتائج سیزن کے باعث کاروباری سرگرمیوں اضافے کی وجہ سے کراچی اسٹاک مارکیٹ میں زبردست تیزی کا رحجان دیکھا گیا اور کے ایس ای 100انڈیکس 36ہزار پوائنٹس کی تاریخی سطح عبور کر گئی تاہم قلیل مدت میں کوئی نیا ٹریگر موجودنہ ہونے اورانڈیکس 36ہزار پوائنٹس کے قریب ہونے کی وجہ سے مارکیٹ تکنیکی گرواٹ کا شکار رہی جس کے باعث کراچی اسٹاک مارکیٹ میں 2روز مندی کا رحجان غالب رہا۔ کراچی اسٹاک مارکیٹ کی ہفتہ وار رپورٹ کے مطابق بدھ تاجمعہ کے دوران کے ایس ای 100انڈیکس میں72.46پوائنٹس کی کمی ریکارڈ کی گئی جس سے کے ایس ای 100انڈیکس 35887.66پوائنٹس سے گھٹ کر35815.20پوائنٹس اور158.52پوائنٹس کی کمی سے کے ایس ای 30انڈیکس22191.51پوائنٹس پر آگیا جبکہ کے ایس ای آل شیئرز انڈیکس24889.63پوائنٹس سے بڑھ کر 24957.63پوائنٹس پر جاپہنچا۔3روز کے دوران مارکیٹ کے سرمائے میں24ارب85کروڑ5لاکھ 96ہزار 497روپے کا اضافہ ریکارڈ کیا گیا جس سے اسٹاک مارکیٹ کا مجموعی سرمایہ76کھرب 88ارب 41کروڑ98لاکھ47ہزار706روپے سے بڑھ کر77کھرب13ارب27کروڑ4لاکھ44ہزار203روپے ہوگیا۔گزشتہ ہفتہ کراچی اسٹاک مارکیٹ میں زیادہ سے زیادہ78کروڑ33لاکھ 31ہزار حصص کا کاروبار ہوا اور ٹریڈنگ ویلیو15ارب روپے تک محدود رہی جبکہ کم سے کم کاروباری لین دین 57کروڑ56لاکھ12ہزار حصص رہا اور اس دن ٹریڈنگ ویلیو16ارب روپے ریکارڈ کیا گیا۔کراچی اسٹاک مارکیٹ میں گزشتہ ہفتہ مجموعی طور پر1183کمپنیوں کا کاروبار ہوا جن میں سے 597کمپنیوں کے حصص کے بھاؤ میں اضافہ، 526میں کمی اور60کمپنیوں کے شیئرز کی قیمتوں میں استحکام رہا۔کاروبارکے لحاظ سے لوٹل کیمیکل ،کے الیکٹرک،بینک آف پنجاب،پیس پاک،دیوان سیمنٹ،پرویز احمد،سلک بینک،ٹیلی کارڈاور بائیکو پیٹرولیم سرفہرست رہے۔

مزید : کامرس