اکتوبر میں 1370 سالہ قرآن پاک کے نایاب نسخے کی زیارت کرانے کا فیصلہ

اکتوبر میں 1370 سالہ قرآن پاک کے نایاب نسخے کی زیارت کرانے کا فیصلہ
اکتوبر میں 1370 سالہ قرآن پاک کے نایاب نسخے کی زیارت کرانے کا فیصلہ

  

برمنگھم(اے این این)برطانیہ کی برمنگھم یونیورسٹی سے ملنے والا 1370 سالہ قرآن پاک کے نایاب نسخہ کی اس سال اکتوبر میں زیارت کرائی جائے گا۔ نایاب نسخے کی موجودگی پر مسلمانوں میں خوشی کی لہر دوڑ گئی ہے۔یونیورسٹی ماہرین کے مطابق قرآن کریم کا نایاب نسخہ لگ بگ 1370 سال پہلے تحریر کیا گیا تھا۔ یونیورسٹی حکام کے اس دعوی سے ظاہر ہوتا کہ چمڑے پر تحریر کردہ یہ قرآنی نسخہ حضور پاک کی زندگی کے 11 سال بعد کا ہے۔ تاہم اس نسخے کی موجودگی پر سنٹرل مسجد کی انتظامیہ کو طلب کیا گیا جس نے قدیم نسخے کی زیارت کی اس حوالہ سے دنیا نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے مسجد انتظامیہ کا کہنا تھا قرآن پاک کے نسخے کی زیارت کے بعد مسجد انتظامیہ نے امکان ظاہر کیا کہ ہو سکتا ہے قرآن پاک کا یہ نایاب نسخہ حضور پاک صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کی ظاہری زندگی میں ہی تحریر کیا گیا ہو اور کوئی صحابی رسول صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم ہی اس کے کاتب ہوں۔ نسخے کی زیارت اکتوبر میں کرائی جائے گا۔ برطانیہ بھر کے مسلمانوں کو اس دن کا بے چینی سے انتظار ہے۔

مزید : بین الاقوامی