پاکستان مالدیپ کا مشترکہ چیلنجز سے ملکر نمٹنے پر اتفاق ، بھارت سارک منشور کا منحرف ، کشمیریوں پر ریاستی دہشتگردی میں بھی ملوث ہے : نواز شریف

پاکستان مالدیپ کا مشترکہ چیلنجز سے ملکر نمٹنے پر اتفاق ، بھارت سارک منشور کا ...

مالے (مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں) وزیر اعظم نواز شریف نے کہاہے بھارت مقبوضہ کشمیر میں ریاستی دہشت گردی میں ملوث ہے، خطے کی ترقی کیلئے سارک کو فعال بنانا لازمی ہے ،نئی دہلی نے سارک کے منشور کے منافی کام کیا اور سارک فورم کے مقصد کو نقصان پہنچایا ہے ۔مالدیپ کے قومی دن پر بطور مہمان خصوصی شرکت پر فخر محسوس کرتا ہوں اور پاکستانی عوام کی جانب سے نیک خواہشات لے کر آیا ہوں، پاکستان مالدیپ میں میڈیکل کالج کی تعمیر میں تعاون کرے گا ،مالدیپ کیساتھ باہمی مفاد کے تمام شعبوں میں تعاون بڑھانا چا ہتے ہیں مشترکہ چیلنجز سے نمٹنے کیلئے دونوں ملکوں کے درمیان اتفاق ہوا ہے،گزشتہ روزمالے میں صدر مالدیب کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے وزیر اعظم نواز شریف نے کہا مالدیپ کی یوم آزادی کی تقریبات میں شرکت باعث مسرت ہے بطور مہمان خصوصی خوشی کے اس لمحے میں مدعو کیا جانا باعث فخر ہے ان تقریبات میں بطور مہمان خصوصی مدعو کرنے پر صدر مالدیپ کا مشکور ہیں، وزیر اعظم نے کہا مالدیپ کے مستقبل کیلئے امن ترقی اور خوشحالی کی تمنائیں ہیں۔مالدیپ کے صدر اسلام آبادمیں سارک اجلاس کے انعقاد کے حامی ہیں پاکستان امن و استحکام کیلئے مالدیپ کے وژن کو سراہتا ہے، دونوں ملکوں کے مشترکہ بزنس گرو پ تشکیل دیئے گئے ہیں ورکنگ گروپس کی چار ذیلی کمیٹیاں بھی کام کر رہی ہیں ،کھیل صحت تعلیم اور انسداد منشیات میں تعاون جاری ہے وزیر اعظم نے کہا پاکستان مالدیپ میں میڈیکل کالج کے قیام کیلئے تعاون کرے گا ،پاکستان کے عوام مالدیپ کے عوام کیلئے نیک تمنائیں رکھتے ہیں ، مالدیپ کے صدر سے ملاقات میں باہمی تعلقات اور مختلف شعبوں میں تعاون کو مذید فروغ دینے کا موقع ملا ہے اس ملاقات میں بھارتی فوج کی جانب سے مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں اور بھارتی جارحیت پر بات چیت ہوئی ،صدر عبداللہ نے ما لد یپ اور دوسرے ملکوں کے درمیان دوستانہ تعلقات کو مذید فروغ دینے کے اپنے وژن سے آگاہ کیا ہے، پاکستان مالدیپ کی ان کو ششو ں کی حمایت کرتا ہے میرے اس دورے میں مفاہمت کی متعدد یادداشتوں پر دستخط ہوئے ہیں جبکہ مالدیپ کے صدر عبداللہ یامین عبدالقیوم نے کہا مختلف شعبون میں تعاون پر بات چیت ہوئی سول سروس، تعلیم ،سیاحت اور تجارت میں تعاون بڑھانے پر اتفاق ہوا ہے تجارت بڑ ھانے کیلئے مشترکہ ورکنگ گروپ کو فعال بنایا جائے گا سیاحت اور عوامی روابط کے شعبوں میں تعاون کو فروغ دیں گے نوجوانوں کی صلا حیتو ں سے استفادے پر توجہ دیں گے، مالدیپ نیشنل ڈیفنس فورس کی استعداد کار بڑھانے کیلئے تعاون پر مشکور ہیں ،پاکستان دیر ینہ ، پائیدار اور قابل اعتبار دوست ملک ہے ،ماحولیاتی تبدیلیوں سے نمٹنے کیلئے تعاون کا عزم رکھتے ہیں، خطے کو درپیش مسائل کے حل پر بھی بات چیت ہوئی ہے ،علاقائی مسائل کے حل کیلئے مشترکہ کوششیں جاری رکھیں گے، مالدیپ کے یوم آزادی کی تقریبات میں بطور مہما ن خصوصی آمد پر وزیر اعظم نواز شریف کے مشکور ہیں ،اس سے قبل پاکستان اور مالدیپ کے درمیان مفاہمت کی متعدد یادداشتوں پر دستخطوں کی تقریب دارالحکومت مالے میں منعقد ہوئی مالدیپ کے صدر اور وزیر اعظم نواز شریف تقریب میں موجود تھے اس موقع پر دونوں ممالک کے درمیان مختلف شعبوں میں تعاون کی یاد داشتوں پر دستخط ہوئے دفتر خارجہ اور سول سروس کے شعبے میں دونوں ملکوں کے درمیان تربیتی تعاون بڑھا نے کی یادداشت ، سیاحت ، ماحولیاتی تبدیلی کے شعبوں میں دو طرفہ تعاون تجارت اور انسانی وسائل کی ترقی کے شعبوں میں تعاون بڑھا نے کی یادداشتوں پر دستخط کئے گئے جبکہ دونوں ملکوں کے درمیان تعلیم کے شعبے میں تعاون پر اتفاق کیا گیا۔اس سے قبل وز یر اعظم نواز شر یف 3روزہ دورے پر مالدیپ پہنچے جہاں صدارتی دفتر میں وزیر اعظم کا شاندار استقبال کیا گیا بعد ازاں وزیر اعظم نوازشر یف کے اعزاز میں مالدیپ کے صدارتی دفتر میں باضابطہ استقبالیہ تقریب ہوئی صدارتی دفتر آمد پر مالدیپ کے صدر عبداللہ یامین عبدالقیوم نے وزیر اعظم نواز شریف کا استقبال کیا وزیر اعظم کو سات توپوں کی سلامی دی گئی، وزیر اعظم نے پریڈ کا معائنہ کیا ،تقریب میں روایتی رقص پر وزیراعظم کا استقبال کیا گیا،مالدیپ کے طلباء کی جانب سے وزیر اعظم کے اعزاز میں ثقافتی شو پیش کیا،بیگم کلثوم نواز ، سرتاج عزیز بھی وزیر اعظم کے ہمراہ ہیں وزیر اعظم سے تقریب میں موجود مالدیپ کے وفد کا تعارف کرایا گیا وزیر اعظم نے ان سے فرداً فرداً ہاتھ ملایا جبکہ وزیر اعظم نے بھی اپنے وفد کا مالدیپ کے صدر سے تعارف کرایا وزیر اعظم آج مالدیپ کے 52ویں یوم آزادی کی تقریبات میں بطور مہمان خصوصی شریک ہوں گے مالدیپ پہنچنے کے بعد ہوائی اڈے پر وزیر اعظم نواز شریف اور مالدیپ کے صدر عبداللہ یامین عبدالقیوم کے درمیان ملاقات ہوئی جس میں دوطرفہ تعلقات اور باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال کیاگیا۔

وزیر اعظم

مزید : صفحہ اول