ٹرین ڈرائیوروں کے وفد کی ریلوے ہیڈکوارٹرز میں سی ای او سے ملاقات

ٹرین ڈرائیوروں کے وفد کی ریلوے ہیڈکوارٹرز میں سی ای او سے ملاقات

لاہور(نمائندہ پاکستان)ٹرین ڈرائیوروں کے وفد کی ریلوے ہیڈکوارٹرز میں سی ای او پاکستان ریلویز محمد جاوید انور سے ملاقات، مسافروں کو پہنچنے والی تکلیف اور مشکل پر افسوس کا اظہار،سینئر ، جونئیرز کو سمجھائیں، پاکستان ریلوے ایک ڈسپلنڈ ادارہ ہے،مطالبات بھی قانون کے مطابق ہی حل کئے جا سکتے ہیں،ہمارے لئے تمام کیٹیگریز اہم ہیں، لوکو رننگ سٹاف کے ناجائز نہیں مگر تمام جائز مطالبات پورے کریں گے محمد جاوید انور۔تفصیلات کے مطابق گزشتہ روز ٹرین ڈرائیوزر کے وفد نے ریلوے ہیڈ کوارٹر میں سی اع او محمد جاوید انور سے ملاقات کیااور جنرل سیکرٹری لوکو رننگ سٹاف شمس پرویز جٹ نے مسافروں کو پیش آنے والی مشکلات پر افسوس کا اظہار کیا جبکہ لوکو رننگ سٹاف کے عہدیداروں نے یہ یقین دہانی بھی کروائی کی وہ کسی قسم کی قانون شکنی کی حمایت نہیں کریں گے۔لوکو رننگ سٹاف کے عہدیداروں کا مزید کہنا تھا کہ انہوں نے اپنی ساکھ بڑی مشکل سے بنائی ہے اور اس پر حرف نہیں آنے دیں گے۔اس موقع پر سی ای او جاوید انور نے کہا کہ ریلوے ڈرائیوروں کو مائیلج الاونس میں پینتالیس سے پچاس فیصد تک اضافے کی سمری پہلے ہی بھیج چکے ہیں اور

ریلوے ملازمین کی ری سٹرکچرنگ اور اپ گریڈیشن کو انصاف اورمیرٹ پر کرنے کے لئے کمیٹی قائم کر دی ہے، ری سٹرکچرنگ اور اپ گریڈیشن کا عمل اسی برس مکمل کرلیں گے۔جبکہ انہوں نے کہا کہ دوٹوک انداز میں کہتے ہیں کہ کسی کو مذاکرات کرتے ہوئے گرفتار نہیں کیاٹرین آپریشن روکنے پر مقدمات درج کیے گئے ہیں۔یونین رہنماوں پر درج مقدمات کا حل قانون کے مطابق نکالا جائے گاآپ کے اقدام نے شدید بدگمانیاں پیدا کیں۔بات چیت میں اے جی ایم ٹریفک عبدالحمید رازی، سی او پی ایس کنور خورشید خالد، سی پی او شعیب عادل اور دیگر افسران نے بھی شرکت کی۔

مزید : صفحہ آخر