ٹرین ڈرائیور ویلفیئر کے ہیڈ کوارٹر میں مذاکرات ناکام، جی ایم نے جھنڈی دکھادی

ٹرین ڈرائیور ویلفیئر کے ہیڈ کوارٹر میں مذاکرات ناکام، جی ایم نے جھنڈی دکھادی

ملتان(جنرل رپورٹر)ٹرین ڈرائیور ویلفےئر ایسوسی ایشن کے ہیڈ کوارٹر میں ہونے والے مذاکرات ناکام ہوگئے جی ایم اے ریلوے نے یونین عہدیداران کو سرخ جھنڈی دکھا کر واپس(بقیہ نمبر48صفحہ12پر )

بھجوادیا اس ضمن میں معلوم ہوا ہے کہ ٹرین ڈرائیوروں نے گزشتہ روز ہیڈ کوارٹر لاہور میں ہونے والے مذاکرات میں انتظامیہ سے مطالبہ کیا تھا کہ حالیہ ہڑتال کے دوران گرفتار ہونے والے ڈرائیوروں پر بنائے گئے مقدمات واپس لے کر فوری طور پر ان کی رہائی کے احکامات دےئے جائیں جس پر جی ایم ریلوے نے کہا کہ یہ میرے بس کی بات نہیں ہڑتال کے روز تمام معاملات کو وزیر ریلوے خود لیڈ کررہے تھے مقدمات کے اندراج اور اخراج کا فیصلہ بھی وزیر ریلوے خود کریں گے۔ معاملہ ٹھنڈا ہونے پر دوبارہ مذاکرات کرکے اس مطالبہ پر غور کیا جائے گا۔ جی ایم ریلوے کی جانب سے صاف جواب سن کر ٹرین ڈرائیور ویلفےئر ایسوسی ایشن کے عہدیداران واپس چلے گئے ۔ملتان سے مذاکرات کے لئے جانے والوں میں ٹرین ڈرائیور غلام شبیر ‘ سمہ سٹہ سے راؤ شاکر اور خانیوال سے وحید شاہ شامل تھے ۔واضح رہے کہ گرفتار ہونے والے ڈرائیوروں میں روہڑی کے محمد فاروق‘ علی حیدر ‘محمد اقبال راولپنڈی کے فدا حیات‘ انجم صغیر ‘علی رضا اور فیاض شامل ہیں۔

مزید : ملتان صفحہ آخر