شانگلہ میں پیپلز پارٹی اور جمعیت العلماء اسلام سے اہم شخصیات کی بغاوت

شانگلہ میں پیپلز پارٹی اور جمعیت العلماء اسلام سے اہم شخصیات کی بغاوت

الپوری(ڈسٹرکٹ رپورٹر) شانگلہ میں پیپلز پارٹی اور جمیعت العلماء اسلام سے اہم شخصیات کی بغاوت قومی وطن پارٹی میں شمولیت کا فیصلہ ،ملی رہبرآفتاب آحمد خان شیرپاؤ کی قیادت میں قومی وطن پارٹی کیلے ہر قسم قربانی دینے کا عہد۔دولت کلے میں قومی وطن پارٹی شانگلہ کے چیئرمین متوکل خان ایڈووکیٹ کی شمولیتی تقریب میں شرکت، پیپلزپارٹی کے اہم رہنماؤں شیر رحمان، حاجی شاہی مند میاں،ضیاء اللہ،فضل رحمان ، بختیار علی، ملکی جان،عطاء اللہ،علی باش، عزیزاللہ،اسحاق، انورعلی،جبکہ جمعیت علماء اسلام کے فریدگل،ظفرعلی،مہمبر،ساہدخان،علی باچا، رسول خان، محمدزرین،صالح سردار،واحد گل، سید باچا، نے اپنے خاندانوں اور سینکڑوں ساتھیوں سمیت قومی وطن پارٹی میں شمولیت کا اعلان کیا۔ شمولیتی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے قومی وطن پارٹی شانگلہ کے چیئرمین متوکل خان ایڈووکیٹ ، حاجی زمین گل،فضل ہادی، انورعلی غوربندی،کمال خان،شیررحمان، عاشق زمان، نعمت ولی، اور فرزندعلی نے کہا کہ ہر روز سینکڑوں افراد کی قومی وطن پارٹی میں شمولیت افتاب احمد خان شیرپاؤ کی قیادت پر عوام کی اعتماد کا اظہارہے اورقومی وطن پارٹی پختونوں کی حقیقی نمائیندہ جماعت ہے انہوں نے کہا کہ شانگلہ کی تعمیر وترقی آفتاب آحمد خان شیرپاؤ کی مرہون منت ہے لیکن دیگر نام نہاد نمائندگان نے شانگلہ کی تعمیر و ترقی پرکوئی توجہ نہیں دی ہے اورشانگلہ سے نام نہادمنتخب نمائندیں شانگلہ کی پسماندگی کے ذمہ داران ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پیرخانہ شانگلہ میں قومی وطن پارٹی کی کامیاب جلسہ نے مخالفین کی نیندیں حرام کررکھی ہے اور موجودہ وقت میں عوام کی نظریں قومی وطن پارٹی اور آفتاب آحمدخان شیرپاؤ پر لگی ہوئی ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ ائندہ انتخابات میں شانگلہ کے عوام کو قومی وطن پارٹی کے امیدواران کامیاب کرکے عوام دشمن سیاستدانوں کو عبرتناک شکست سے دوچارکرینگے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر