ٹیکسلا عدالت میں خون کی ہولی کھیلنے کے چاروکلاء کومیسج وصول

ٹیکسلا عدالت میں خون کی ہولی کھیلنے کے چاروکلاء کومیسج وصول

ٹیکسلا(نمائندہ پاکستان)ٹیکسلا عدالت میں خون کی ہولی کھیلنے کی دھمکی 249ٹیکسلا بار کے چار وکلا کو دھمکی آمیز مسیج وصول ہوئے،تفصیلات کے مطابق ٹیکسلا عدالت میں خون کی ہولی کھیلنے کی دھمکی 249ٹیکسلا بار کے چار وکلا کو دھمکی آمیز مسیج وصول ہوئے کہ آج ۹بجے ٹیکسلا کورٹ میں دھماکہ ہوگااوراطلاع دیدی ہے دس بندوں کوماریں گے سنبھال سکتے ہو تو سنبھال لینا۔داعش کا ادنی کارکن،دہشت گردوں نے ایک اور میسج میں لکھا کہ ایک گھنٹہ بعد ٹیکسلا کچہری موت کا رقص ہوگا،ہم کچہری میں دہشت گردی کرنے آ رہے ہیں انتظار کرو، داعش،۔یہ خبر سنتے ہی ججز نے فوری طور پر عدالت کی کاروائی کو ختم کر دیا۔ججز نے فوری طور پر احاطہ عدالت کو خالی کروا لیا ٹیکسلا عدالت کے باہر سکیورٹی کے سخت انتظامات کر دیے گئے ہیں کسی غیر متعلقہ شخص کو عدالت میں داخل نہیں ہونے دیا جا رہا۔بار کے صدر میر ناصر بلال نے فوری طور پر ججز کو مطلع کیا اور جس پرٹیکسلا بار روم میں ہنگامی میٹینگ کی گئی اور فوری طور پر اتنظامیہ کو طلب کیا گیا، ٹیکسلا عدالت کے باہر سکیورٹی کے سخت انتظامات کر دیے گئے ہیں کسی غیر متعلقہ شخص کو عدالت میں داخل نہیں ہونے دیا جا رہا۔اس موقع پر صدر بار میر ناصر بلال نیمیڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ایوان عدل اور ٹیکسلا بار ایک اہم ادارہ ہے اور ہم موجودہ سیکیورٹی سیمطمئن نہیں ہیں اور انتظامیہ سے اپیل کرتے ہیں کہ پولیس کی بجائے رینجرز ایوان کی سیکورٹی پر تعینات کیا جائے.

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر