پاکستان پیپلزپارٹی کے زیر اہتمام دبئی میں تقریب

پاکستان پیپلزپارٹی کے زیر اہتمام دبئی میں تقریب
پاکستان پیپلزپارٹی کے زیر اہتمام دبئی میں تقریب

  

دبئی (طاہر منیر طاہر) پاکستان پیپلزپارٹی کے زیراہتمام دبئی میں ایک تریب ہوئی جس میں پاناما لیکس کے حوالے سے نواز شریف حکومت کو آڑے ہاتھوں لیا گیا۔ حکومت کی غلط پالیسیوں پر شدید تنقید کی گئی اور کرپشن کے حوالے سے ن لیگ حکومت کو نشانے پر لیا گیا۔ پیپلزپارٹی کے زیر اہتمام یہ تقریب ویسے تو عیدملن پارٹی کے حوالے سے رکھی گئی لیکن حالات حاضرہ کے تحت عید ملن پارٹی ایک سیاسی تقریب بن گئی جس میں حکمران جماعت کی بدعنوانیوں اور کرپشن کو کھول کھول کر بیان کیا گیا۔

پیپلزپارٹی کے زیراہتمام یہ تقریب پرنس اقبال گورایہ اور نثار خٹک کے تعاون سے منعقد ہوئی جس میں چودھری عارف شفیع، راشد چغتائی، سید سجاد حسین شاہ، سردار جاوید یعقوب، میاں منیر ہانس، حاجی عرفان گوندل، ذوالفقار بسرا، سجاد اعوان، خادم شاہین، مظفر باجوہ، زاہدہ ملک، آسیہ خان، حنا خان، عاتکہ مبین، شہناز امین، غزالہ خالد، طاہرہ مغل، وفاق حسین، تصور حسین، شیریں درانی اور محمد اکرم کے علاوہ دیگر متعدد لوگوں نے شرکت کی۔ تقریب کے دوران سردار جاوید یعقوب نے سٹیج سیکرٹری کے فرائض سرانجام دئیے۔

تقریب کے دوران مقررین نے تقاریر کرتے ہوئے کہا کہ گزشتہ 30 سال سے نواز شریف خاندان حکومت پر قابض ہے جو ملک کو لوٹ لوٹ کر کھارہا ہے۔ اس کے کارندے کرپشن میں ملوث ہیں اب ان کے احتساب کا وقت آگیا ہے۔ سپریم کورٹ سے ہماریا پیل ہے کہ پاکستان کو کرپشن کے بادشاہوں، چوروں اور لٹیروں سے نجات دلائی جائے۔ مقررین نے کہا کہ ہم بھٹو ازم کے داعی ہیں، بھٹو ازم ہی ملک کو ترقی کی راہ پر گامزن کرسکتا ہے۔ پیپلزپارٹی کے دور حکومت میں جس قدر ترقی پاکستان کو نصیب ہوئی اتنی ترقی پاکستان کو کبھی نہیں ملی۔ آج زیر تکمیل منصوبے بھی زیادہ تر پی پی پی کے دورمیں منظور ہوئے جن پر کام ہورہا ہے۔ آئندہ بھی پی پی پی ہی ملکی ترقی کی ضامن ہے۔

مقررین نے کہا کہ ہم اپنے قائدین آصف علی زرداری اور بلاول بھٹو زرداری پر یقین رکھتے ہیں، وہ بھٹو ازم کے امین ہیں جبکہ ہم سب ان کی ایک بات پر لبیک کہنے کو تیار ہیں۔

مزید : عرب دنیا