خالی پلاٹوں اور گرین بیلٹس میں جمع پانی سے مچھروں کی بہتات ، ڈینگی پھیلنے کا خطرہ

خالی پلاٹوں اور گرین بیلٹس میں جمع پانی سے مچھروں کی بہتات ، ڈینگی پھیلنے کا ...

لاہور(جاوید اقبال) صوبائی دارالحکومت میں خالی پلاٹوں اور گرین بیلٹس میں جمع پانی نہیں نکالا جا سکا اسی طرح پارکس اور دیگر مقامات پر لگائے گئے فواروں کے ’’حوض‘‘ میں کئی ہفتوں کے پانی جمع ہے جس سے شہر میں مچھروں کی بہتات ہو گئی ہیں اور ماہرین کا دعویٰ ہے کہ اگر خالی پلاٹوں اور دیگر مقامات پر جمع پانی نہ نکالا گیا تو چونکہ یہ پانی صاف ہے لہٰذا اسی بات کا قوی امکان ہے کہ ڈینگی مچھر پیدا ہو سکتے ہیں اور لاہور میں ڈینگی کے مریضوں کی بہت بڑی تعداد اسی کا شکار ہو سکتی ہے اس حوالے سے پیشنٹ پروٹیکشن کونسل آف پاکستان نے خطرات سے نگران وزیر اعلیٰ پنجاب کو آگاہ کر دیا ہے اور انہیں مراسلہ بھجوایا ہے جو کہ کونسل کی سپریم ایڈوائزری کونسل کے کنوینر ڈاکٹر الحاج فیاض رانجھا اور صدر جاوید دین اور چیئرمین حاجی غلام حسین منہاس کی طرف سے بھجوایا گیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ واسا لاہور کی ہاؤسنگ سکیموں سمیت دیگر سوسائٹیوں میں موجود خالی پلاٹوں میں جمع بارشی پانی نکالنے میں بری طرح ناکام ہوا ہے یا واسا کی مجرمانہ غفلت ہے اسی طرح شہر میں موجود گرین بیلٹس میں بھی بارش پانی کئی ہفتوں سے جمع ہے باغات اور سیرگاہوں میں بھی بارشی پانی جمع ہے لاہور کنال کے دونوں اطراف میں موجود گرین بیلٹس میں پانی جمع ہے مصطفےٰ ٹاؤن میں گرین بیلٹس میں پانی جمع ہے جوہر ٹاؤن جلو کے علاقے ٹاؤن شپ شاہدرہ سمیت پورے شہر میں جگہ جگہ پانی جمع ہے جن پر خدشہ ہے کہ بہت بڑی تعداد میں ڈینگی مچھروں کا لاوا پیدا ہو سکتا ہے جو بعد میں ڈینگی بن کر شہریوں کی صحت کو نقصان پہنچا سکتا ہے لہٰذا جگہ جگہ جمع بارش پانی کو جنگی بنیادوں پر تلف کرنے کے انتظامات کئے جائیں مراسلہ پر وزیر اعلیٰ نے ایکشن لیتے ہوئے محکمہ بلدیات ہاؤسنگ کو فوری طور پر انتظامات کرنے اور جمع بارشی پانی کو نکالنے کی ہدایات جاری کر رہی ہے اسی حوالے سے پنجاب کے وزیر اطلعاات احمد وقاض ریاض کا کہنا ہے کہ شہر میں جس مقام پر بارشی پانی جمع ہے اسی کو فوری طور پر تلف کرنے کی ہدایات جاری کر دی گئی ہیں اس سلسلے میں وزیر اعلیٰ نے متعلقہ حکام سے کہا ہے کہ کسی قسم کی کوتاہی برداشت نہیں کی جائے گی۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...