اراضی قبضہ کیس،پرائیویٹ آدمی کو اختیارات کیسے دیئے گئے،اسلام آآباد ہائیکورٹ کا چیف کمشنر سے سال

اراضی قبضہ کیس،پرائیویٹ آدمی کو اختیارات کیسے دیئے گئے،اسلام آآباد ...

  

اسلام آباد(آئی این پی) چیف جسٹس ہائی کورٹ جسٹس اطہر من اللہ نے پنجاب کے سینئر وزیرعلیم خان کی ہاؤسنگ سوسائٹی کیخلاف زمینوں پر مبینہ قبضے سے متعلق کیس کی سماعت کے دوران ریمارکس دیئے کہ علیم خان کی سوسائٹی کیخلاف اس عدالت کے سامنے روز درخواستیں آ رہی ہیں۔ اسلام آباد ہائی کورٹ کے جسٹس اطہر من اللہ نے پنجاب کے سینئر وزیر علیم خان کی ہاؤسنگ سوسائٹی کیخلاف زمینوں پر مبینہ قبضے سے متعلق کیس پر سماعت کی۔ چیف جسٹس اطہر من اللہ نے سی ڈی اے حکام کی عدم پیشی پر برہمی کا اظہار کرتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ علیم خان کی سوسائٹی کیخلاف اس عدالت کے سامنے روز درخواستیں آ رہی ہیں، بادی النظر میں سی ڈی اے نے اپنی زمین کو ہتھیانے کا خود علیم خان کی سوسائٹی کو اختیار دے رکھا تھا، سی ڈی اے اور چیف کمشنر جواب دیں کس قانون کے تحت یہ اختیار پرائیویٹ آدمی کو دیا گیا، چیف کمشنر اسلام آباد بتائیں کیسے ایک پرائیویٹ سوسائٹی کو قانون ہاتھ میں لینے کی اجازت دی گئی؟ چیف کمشنر اسلام آباد اپنا نمائندہ مقرر کریں جو اس عدالت میں پیش ہو کر جواب دے۔

اسلام آباد ہائیکورٹ

مزید :

صفحہ آخر -