نماز جمعہ پڑھانے والے امام کی تھانے میں پٹائی، علی گڑھ سے انتہائی شرمناک خبر آگئی

نماز جمعہ پڑھانے والے امام کی تھانے میں پٹائی، علی گڑھ سے انتہائی شرمناک خبر ...
نماز جمعہ پڑھانے والے امام کی تھانے میں پٹائی، علی گڑھ سے انتہائی شرمناک خبر آگئی

  

علی گڑھ (ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارتی ریاست مہاراشٹر کے ضلع علی گڑھ میں پولیس کی جانب سے نماز جمعہ پڑھانے پر امام مسجد کو تھانے میں تشدد کا نشانہ بنایا گیا ہے۔

تھانہ جواں کے علاقے میں پولیس نے نماز جمعہ کے وقت مسجد پر دھاوا بول دیا اور امام مسجد سمیت تمام نمازیوں کو اٹھا کر تھانے لے گئی۔ امام مسجد مولانا فیروز عالم کے مطابق پولیس نے ان کے ساتھ انتہائی پرتشدد رویہ اپنایا، پولیس اہلکاروں نے انہیں نہ صرف گندی گالیاں دیں بلکہ تشدد کا نشانہ بھی بنایا، پولیس نے نمازیوں کو بھی گالیاں دیں اور انہیں ایک کمرے میں بند کردیا۔

مولانا فیروز عالم نے میڈیا کو جاری کیے گئے اپنے بیان میں کہا ہے کہ محض 10 افراد جمعہ کی نماز ادا کرانے کے لئے مسجد میں داخل ہوئے تھے جبکہ اس سے قبل انہوں نے مسجد کے مائک سے ہی یہ اعلان کیا تھا کہ سب لوگ اپنے اپنے گھروں میں ہی نماز ادا کریں۔

انہوں نے اپنے بیان میں مزید کہا کہ  نماز ختم ہوتے ہی پولیس کے چند اہلکاروں نے مسجد سے ہی انہیں گرفتار کرلیا جبکہ کچھ لوگوں کو گھر سے اٹھا کر تھانے میں موجود ایک کمرے میں بند کرکے ان کے ساتھ بد سلوکی کرتے ہوئی مار پیٹ کی گئی جو کہ قانون کے خلاف ہے۔ انہوں نے ریاستی حکومت سے پولیس عملہ کے خلاف قانونی کارروائی کا مطالبہ کیا ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -