برطانیہ میں ہزاروں لوگ سائیکلوں پر برہنہ حالت میں سڑکوں پر نکل آئے

برطانیہ میں ہزاروں لوگ سائیکلوں پر برہنہ حالت میں سڑکوں پر نکل آئے
برطانیہ میں ہزاروں لوگ سائیکلوں پر برہنہ حالت میں سڑکوں پر نکل آئے

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) گزشتہ روز 25جولائی کو ’برہنہ حالت میں سائیکل چلانے کا عالمی دن‘ منایا گیا۔ ڈیلی سٹار کے مطابق اس شرمناک دن پردنیا کے مختلف ممالک میں مردوخواتین نیم برہنہ یا مکمل برہنہ حالت میں سائیکل چلاتے ہیں۔ اس دوران وہ اپنے جسم پر پینٹ سے مختلف نقش و نگار بنواتے اور مختلف فقرے لکھواتے ہیں۔ 

برطانیہ میں بھی ہزاروں لوگ گزشتہ روز برہنہ حالت میں سائیکلوں پر سڑکوں پر نکلے۔ کارڈف یونیورسٹی سے برہنہ سائیکل سواروں کی ایک بہت بڑی ریلی نکلی، جو سٹی سنٹر اور دیگر مقامات سے ہوتے ہوئے واپس یونیورسٹی پہنچ کر ہی اختتام پذیر ہوئی۔ ان میں شامل مردوخواتین کی اکثریت مکمل برہنہ تھی جبکہ بعض نے زیرجامے پہن رکھے تھے۔ 

واضح رہے کہ یہ شرمناک دن 2004ءمیں پہلی بار منایا گیا تھا اور اس کے بعد سے ہر سال منایا جا رہا ہے۔ برطانیہ میں اس دن پر لندن اور برنگٹن میں سب سے زیادہ لوگ برہنہ سائیکل ریلیوں میں حصہ لیتے ہیں۔ کچھ لوگ اکیلے ہی برہنہ حالت میں سائیکل پر شہر کا چکر لگاتے ہیں۔ ان دو شہروں میں ہر سال 1ہزار سے زائد لوگ یہ دن مناتے ہیں۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -برطانیہ -